جان کیری 16 مارچ سے پہلے روس جائیں گے

روسی قیادت کے ساتھ یوکرین تنازعے پر مذاکرات کرینگے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

امریکی وزیر خارجہ جان کیری اپنے روسی ہم منصب سرگئی لاوروف سے یوکرین میں 16 مارچ کو ہونے والے ریفرینڈم سے پہلے ملاقات کریں گے۔ جان کیری نے امریکی قانون سازوں کو بتایا ہے کہ وہ آج جمعرات کی رات پہلے مرحلے پر لندن کیلیے روانہ ہوں گے اور بعد ازاں وہاں سے روسی وزیر خارجہ سرگئی لاوروف سے ملاقات کیلیے جائیں گے۔

اس متوقع ملاقات کے حوالے سے جان کیری نے کہا '' ہم روسی وزیر خارجہ کو متعین آپشنز دیں گے ، ہمیں امید ہے کہ عالمی امیدیں پوری ہوں گی اور ہم یوکرین کے حوالے سے پیدا شدہ صورتحال کو بہتر کرنے میں کامیاب رہیں گے ۔''

اس سے پہلے امریکی اور روسی سفارت کاروں کے درمیان پچھلے ہفتے کے دوران روم اور پیرس میں کئی بار سفارتی نوعیت کی مڈبھیڑ ہو چکی ہے۔ جبکہ تین سخت موقف کی حامل فون کالز کا بھی اعلی سطح پر تبادلہ ہو چکا ہے۔

روس کے ہزاروں فوجی کریمیا میں داخل ہوچکے ہیں، جبکہ یوکرینی جزیرہ نما 16 مارچ کو امکانی ریفرنڈم کی تیاری میں ہے۔ تا کہ روس کے ساتھ ملنے یا نہ ملنے کا فیصلہ عوامی رائے کے مطابق ہو سکے۔ روسی صدر ولادی میر پیوتن نے یوکرائین کی صورت حال پر تاتار کمیونٹی کے رہنما کے ساتھ فون پر رابطہ کیا ہے۔

واضح رہے تاتاری قبیلے کے لوگوں کی بڑی تعداد روسی حمایت سے ہونے والے ریفرنڈم کا بائیکاٹ کرنے کے حق میں ہیں۔ تاتار آبادی یوکرین کی مجموعی آبادی کے بارہ فیصد پر مشتمل ہے۔ تاتاری قبیلے کے لوگوں نے '' قومی یکجہتی'' کے نام سے ریفرنڈم کیخلاف مظاہرے بھی کیے ہیں۔

جان کیری نے امریکی قانون سازوں سے یہ بات چیت یوکرینی وزیر اعظم کا امریکا میں خیر مقدم کرنے سے محض کچھ دیر پہلے کی ہے۔ جان کیری نے اسی ہفتے ماسکو صدر پیوتن سے ملاقات کی دعوت مسترد کی ہے۔ امریکی حکام کا کہنا ہے کہ ابھی تک روس کی طرف سے یوکرین کی نئی قیادت کے ساتھ بات چیت کی تیاری کی کوئی اطلاع نہیں ملی ہے۔

جان کیری نے کہا ہو سکتا یہ کسی کے مفاد میں نہیں ہے کہ ماسکو تنہا ہو جائے، لیکن اگر روس مسئلے کے حل کیلیے درست سمت پر نہیں آتا تو ہم وہی کریں گے جو ہمیں کرنا ہے۔''

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں