.

کیری کی اسرائیلی وزیر اعظم سے 2 دن میں 2 ملاقاتیں

اسرائیلی جاسوس کی رہائی زیر بحث آئی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکی وزیر خارجہ جان کیری جو ان دنوں امن مذاکرات کے سلسلے میں پیش رفت کی کوششوں کے لیے مشرق وسطی کے دورے پر ہیں نے منگل کے روز اسرائیلی وزیر اعظم بنجمن نیتن یاہو سے بات چیت کا دوسرا دور مکمل کرلیا ہے۔ بات چیت کا پہلا دور انہوں نے 31 ایک روز قبل مارچ کو مقبوضہ یروشلم میں مکمل کیا تھا۔

دونوں کے درمیان مذاکرات کا یہ دور فلسطینی صدر محمود عباس کی طرف سے امریکی وزیر خارجہ کے ساتھ ملاقات منسوخ کرنے کے بعد طے کیا گیا تھا۔ محمود عباس نے کیری اور یاہو کی پہلی ملاقات کے طول پکڑ جانے کے باعث جان کیری سے ملاقات منسوخ کر دی تھی۔

اس صورت حال میں جان کیری نے فلسطین کے چیف مذاکرات کار صائب ارکات سے ملاقات کی تھی۔ ذرائع کے مطابق جان کیری اور نیتن یاہو کی ملاقات میں امریکی نژاد اسرائیلی جاسوس کی رہائی کا سوال بھی زیر بحث آیا تاکہ امن مذاکرات آگے بڑھ سکیں۔ واضح رہے جولائی 2013 میں امریکی کوششوں سے از سرنو شروع ہونے والے امن مذاکرات کے لیے 29 اپریل کی ڈیڈ لائن مقرر کی گئی ہے۔

تاہم اسرائیل مذاکرات کے تنا ظر میں مزید فلسطینی قیدیوں کی رہائی سے منحرف ہو گیا ہے۔ فلسطینی اتھارٹی نے پیر کے روز جان کیری کو 24 گھنٹے کی ڈیڈ لائن دی تھی تاکہ اسرائیل کو وعدے کے مطابق فلسطینی اسیران کی رہائی پر آمادہ کر سکیں۔ بصورت دیگر فلسطینی اقوام متحدہ سے رجوع کریں گے۔