.

جنوبی کوریا کا نئے بیلسٹک میزائل کا تجربہ

شمالی کوریا میں اہداف کو نشانہ بنانے کے لیے رینج 800 کلومیٹر تک بڑھائی جائے گی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

جنوبی کوریا نے ایک نئے بیلسٹک میزائل کا تجربہ کیا ہے جو 500 کلومیٹر تک مار کرنے کی صلاحیت رکھتا ہے۔جنوبی کوریا اس کی رینج کو 800 کلومیٹر تک بڑھانے کا ارادہ رکھتا ہے تاکہ یہ میزائل شمالی کوریا میں کسی بھی جگہ مار کرسکے۔

جنوبی کوریا کی وزارت دفاع کے ترجمان کم من سیوک نے جمعہ کو سیول میں ایک نیوزبریفنگ کے دوران بتایا ہے کہ اس نئے میزائل کا تجربہ شمالی کوریا کی جانب سے درمیانے فاصلے تک مار کرنے والے میزائل کے تجربے کے جواب میں کیا گیا ہے اور اس کا مقصد شمالی کوریا کے میزائل اور جوہری پروگرام سے لاحق خطرات کا توڑ کرنا ہے۔

ترجمان نے کہا کہ اب ہم 800 کلومیٹر تک مار کرنے والے میزائل تیار کرنا چاہتے ہیں اور ان سے شمالی کوریا کے ہتھیاروں اور فوجی تنصیبات کو کہیں بھی نشانہ بنایا جاسکے گا۔

واضح رہے کہ جنوبی کوریا نے امریکا کے ساتھ ایک معاہدے کے تحت رضاکارانہ طور پر تین سو کلومیٹر سے زیادہ فاصلے تک مار کرنے والے بیلسٹک میزائلوں کی تیاری پر پابندی لگا رکھی تھی لیکن ان دونوں اتحادی ممالک نے 2012ء میں ایک سمجھوتے سے اتفاق کیا تھا جس کے تحت جنوبی کوریا کو 800کلومیٹر تک مار کرنے والے میزائل تیار کرنے کی اجازت دے دی گئی تھی۔