انٹرنیٹ امریکی سی آئی اے کا منصوبہ ہے:ولادی میر پوتین

روس کےآن لائن مفادات کا تحفظ کیا جائے گا:میڈیا کانفرنس میں گفتگو

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

روسی صدر ولادی میر پوتین نے انٹرنیٹ کو امریکا کے مرکزی خفیہ ادارے سی آئی اے کا منصوبہ قراردے دیا ہے اور روس کے آن لائن مفادات کے تحفظ کا عزم ظاہر کیا ہے۔

وہ جمعرات کو سینٹ پیٹرز برگ میں منعقدہ ایک میڈیا فورم میں تقریر کررہے تھے۔انھوں نے کہا کہ ''انٹرنیٹ اپنی اصل میں سی آئی اے کا ایک منصوبہ تھا اور اس کو ابھی تک اسی حیثیت میں ترقی دی جارہی ہے''۔سی آئی اے کے انٹرنیٹ پر اس اثر کی مزاحمت کے حوالے سے ولادی میر پوتین نے کہا کہ روس کو آن لائن اپنے مفادات کے تحفظ کے لیے جدوجہد کی ضرورت ہے۔

ان کے اس بیان سے قبل ہی کریملن حکومت انٹرنیٹ پر زیادہ کنٹرول حاصل کرنے کے لیے کوشاں ہے۔روس کے قومی ٹیلی ویژن پر حزب اختلاف کے کارکنان کی سرگرمیاں دکھانے کی پابندی ہے۔اس کے پیش نظر وہ اپنے حکومت مخالف احتجاج اور نظریات کو سامنے لانے کے لیے انٹرنیٹ ہی کو استعمال کررہے ہیں۔

روسی پارلیمان ڈوما نے اسی ہفتے ایک قانون کی منظوری دی ہے جس کے تحت سوشل میڈیا کی ویب سائٹس پر روس ہی میں اپنے سرورز رکھنے کی پابندی عاید کردی گئی ہے اور وہ چھے ماہ تک اپنے صارفین سے متعلق تمام معلومات کو بھی محفوظ رکھنے کی پابند ہوں گی۔ واضح رہے کہ صدر پوتین کے قریب سمجھے جانے والے ایک کاروباری کو روس کے سب سے بڑے سوشل میڈیا نیٹ ورک ''وی کونٹیکٹ'' کا کنٹرول حاصل ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں