پاسداران انقلاب کے ٹی وی چینل کی نشریات کا آغاز

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

ایرانی پاسداران انقلاب نے اپنے پہلے ٹیلی ویژن چینل کی نشریات کا آغاز باضابطہ کر دیا ہے۔ چینل کی آزمائشی نشریات میں ایرانی انقلاب کی اسلامی اقدار اور مقدس مقامات کے دفاع کو فوکس کیا گیا ہے۔

ایرانی میڈیا کی رپورٹس کے مطابق پاسداران انقلاب کے ٹیلی ویژن چینل 'افق' کی نشریات کا آغاز یکم رمضان المبارک کو ہوا ہے۔ ٹی وی پر دستاویزی فلم پروڈکشن کے ادارے "اوج" کی تیارکردہ دستاویزی فلمیں بھی دکھائی جا رہی ہیں اور یہی ادارہ ٹی وی کے مالی معاملات میں سب سے بڑا معاون بھی ہے۔

خیال رہے کہ ایرانی دستور کے مطابق ملک میں نشرو اشاعت کے حوالے سے تمام اختیارات ریڈیو اور ٹیلی ویژن کارپوریشن کے پاس ہیں۔ کارپوریشن اپنی صوابدید پر کسی ادارے یا فرد کو چینل چلانے کی اجازت حاصل ہے۔ ماضی میں کوشش کے باوجود تہران بلدیہ اور ایرانی عدلیہ اپنے لیے چینل کی منظوری میں ناکام رہے ہیں۔ تاہم پاسداران انقلاب کو ٹی وی چینل چلانے کی اجازت مل گئی تھی۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق عزت اللہ ضرغامی ریڈیو وٹیلی ویژن کارپوریشن کے چیئرمین ہیں، تاہم ان کے عہدے کی مدت اب ختم ہونے کو ہے۔ گذشتہ فروری میں انہوں نے کہا تھا کہ کارپوریشن نے ملک میں 22 ویں ٹیلی ویژن چینل کی نشریات کی اجازت دے دی ہے۔ پہلے اس نئے ٹی وی چینل کا نام 'عصر' رکھا گیا تھا تاہم بعد میں اسے تبدیل کر کے 'افق دیکھیے' رکھا گیا۔

فارسی نیوز ویب پورٹل 'نسیم' سے گفتگو کرتے ہوئے مسٹر ضرغامی کا کہنا تھا کہ نئے ٹیلی ویژن چینل کی نشریات کا زیادہ حصہ اسلامی جمہوریہ ایران کے اسلامی انقلاب، دینی اقدار، اس کے اصول و مبادی اور مقدسات کے دفاع پر مشتمل ہو گا۔

'افق' ٹی وی کے ناظرین کی تعداد بڑھانے کے لیے پروپیگنڈہ مہم جاری ہے اور ٹی وی کے حوالے سے کئی ویڈیوز فوٹیج پوسٹ کی گئی ہیں۔ نئے ٹیلی ویژن چینل کے ذرائع امدن کا سوال اپنی جگہ موجود ہے کہ کیا اسے بھی بعض دوسرے ٹیلی ویژن چینلوں کی طرح 'سیکریٹ' فنڈز سے چلایا جائے گا۔ تاہم پاسداران انقلاب کے ترجمان جنرل رمضان شریف نے میڈیا کو بتایا کہ ٹی وی کے بیشتر اخراجات فلم پروڈکشن ادارہ "اوج" برداشت کرے گا کیونکہ اس ٹی وی پر پروڈکشن کمپنی کی دستاویزی فلمیں دکھائی جائیں گی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں