"نائن الیون کے بعد امریکا نے کچھ لوگوں پر تشدد کیا"

کی میرے قتل کے بعد اس نے جفا سے توبہ!

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

امریکی صدر باراک اوباما نے اس بات کا اعتراف کیا ہے کہ نائن الیون کے فوری بعد امریکا سے کچھ ایسی غلطیاں ہوئیں جن میں تمام حدیں پار ہو گئیں۔ ان کے بقول: "ہم نے کچھ لوگوں کو تشدد کا نشانہ بنایا۔"

ان خیالات کا اظہار امریکی صدر نے سی آئی اے کے تفتیشی طریقہ کار سے متعلق سینٹ کی تحقیقاتی رپورٹ پر تبصرہ کرتے ہوئے کیا۔ اس تحقیقاتی رپورٹ کے نتائج آنے والے چند ہفتوں میں جاری کئے جانے کی امید ہے۔

صدر اوباما کے مطابق: "گیارہ ستمبر 2001 کے بعد امریکی بہت خوفزدہ تھے۔ تاہم اس کے باوجود امریکا کا اپنی اقدار کو یاد رکھتے ہوئے ان کا پاس ضروری تھا۔

باراک اوباما نے کہا کہ انہیں سی آئی اے کے ڈائریکٹر جان برینن پر مکمل اعتماد ہے۔ سی آئی اے کے ڈائریکٹر نے امریکی سینٹیرز سے اس بات پر معذرت چاہی ہے کہ ان کے ماتحت عملے نے سینٹ کے عملے کے کمپیوٹرز کی نامناسب انداز میں تلاشی لی تاکہ مابعد نائن الیون معاملات کی چھان بین کر سکیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں