دو کویتیوں سمیت امریکا نے 3 افراد بلیک لسٹ کر دیے

شام اور عراق میں انتہا پسند تنظیموں کے لیے فنڈ جمع کرنے کا الزام

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

امریکا نے شام اور عراق میں انتہا پسند تنظیموں کو مالی تعاون فراہم کرنے کے الزام میں دو کویتی شہریوں سمیت تین افراد کو بلیک لسٹ کر دیا ہے۔

امریکی وزارت خزانہ کے اعلان کے مطابق جن کویتی شہریوں کے نام بلیک لسٹ کئے گئے ہیں ان کی شناخت 41 سالہ الشیخ شافی العجمی اور 26 سالہ حجاج العجمی کے طور پر کی گئی ہے اور دونوں پر شام میں القاعدہ کی ذیلی تنظیم النصرہ محاذ کے لئے فنڈ جمع کرنے کا الزام ہے۔

دہشت گردی کو مالی تعاون کی فراہمی روکنے سے متعلق امریکا کے نائب وزیر خزانہ ڈیوڈ کوہین کا کہنا تھا کہ بلیک لسٹ کئے جانے والے افراد سماجی رابطے کی ویب سائٹس اور مالی نیٹ ورکس کے ذریعے شام اور عراق میں دہشت گردی آپریشنز کے لیے فنڈ جمع کر رہے تھے۔"

امریکی اعلان کے مطابق بلیک لسٹ کئے جانے والا تیسرا شخص عبدالرحمن خلف العنیزی چالیس کے پیٹے میں ہے، تاہم اس کی شہریت نہیں بتائی گئی۔ اس پر عراق میں 'دولت اسلامی' کو مالی تعاون فراہم کرنے کا الزام عاید کیا گیا ہے۔

بلیک لسٹ میں نام شامل ہونے کی بنا پر ان تینوں افراد کے امریکا میں اگر بینک اکاونٹس ہوئے تو وہ تمام منجمد ہو جائیں گے۔ پابندی کے بموجب کوئی بھی امریکی شخص یا کمپنی بلیک لسٹ افراد کے ساتھ مالی لین دین نہیں کر سکے گی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں