امریکا، تیونس کو بلیک ہاک ہیلی کاپٹر فراہم کرے گا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

دُنیا بھر میں اسلحہ اور جنگی ساز و سامان کی بندر بانٹ میں مشہور امریکی حکومت نے عرب ملک تیونس کو دہشت گردی کے خلاف جنگ میں مدد فراہم کرنے کے لیے جنگی ہیلی کاپٹر اور دیگر دفاعی آلات فراہم کرنے کا اعلان کیا ہے۔

تیونس کی میڈیا رپورٹس کے مطابق دارالحکومت تیونسیہ میں متعین امریکی سفیر جاکوب الس نے کہا ہے کہ ان کا ملک جلد ہی تیونس کو 12 بلیک ہاک ہیلی کاپٹر اور دیگر جنگی ساز وسامان فراہم کر دے گا، جسے تیونسی حکومت دہشت گردی کے خلاف جنگ میں استعمال کرے گی۔

قبل ازیں امریکی سفیر نے اخبارنویسوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا تھا کہ امریکی محکمہ دفاع اور تیونسی حکومت کے درمیان اسلحہ کی ایک بڑی ڈیل کے لیے بات چیت جاری ہے۔ اس ضمن میں تیونس کو جدید آلات سے لیس ایک درجن فوجی ہیلی کاپٹر فراہم کیے جانے پر اتفاق ہو چکا ہے۔

امریکی سفیر نے مزید کہا کہ دونوں ملکوں کے درمیان دفاعی تعاون کے حوالے سے بات چیت پہلے بھی ہوتی رہی ہے۔ امریکی حکومت نے تیونس کو پیش آئند سال کے آغاز میں 14 ملین ڈالر کا دفاعی سامان فروخت کرنے کا یقین دلایا ہے۔

ادھر امریکی میڈیا کی رپورٹس میں بھی پینٹا گان کی جانب سے تیونس کو دفاعی آلات کی فراہمی کی خبریں شائع ہوئی ہیں۔ ان خبروں میں بتایا گیا ہے کہ امریکا، تیونس کو 700 ملین ڈالر مالیت کے 12 بلیک ہاک ایچ یو ایچ 60 ایم ہیلی فروخت کرنے کے لیے تیار ہے۔

رپورٹس کے مطابق جدید ترین نوعیت کے یہ جنگی ہیلی کاپٹر لیزر میزائل، گولہ اور ماٹر گن کے ذریعے فائرنگ کی صلاحیت کے ساتھ جدید کیمروں، دور بینوں، رڈار اور دشمن کے حملے کی خطرے کی پیشگی اطلاع جیسی لاجسٹک خصوصیات کے حامل ہوں گے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں