عراق اور شام میں برسرپیکار دو جنگجو بلیک لسٹ

العدنانی اور سعیدعارف امریکا کی عالمی دہشت گردوں کی فہرست میں شامل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

امریکا نے عراق اور شام میں برسرپیکار دولت اسلامی (داعش) اور القاعدہ سے وابستہ النصرۃ محاذ سے تعلق رکھنے والے دو جنگجوؤں کو عالمی دہشت گرد قرار دے کر ان پر پابندیاں عاید کردی ہیں۔

امریکی محکمہ خارجہ نے سوموار کو جاری کردہ ایک بیان میں کہا ہے کہ اس نے دولت اسلامی عراق وشام کے ترجمان ابو محمد العدنانی اور النصرۃ محاذ کے رکن سعید عارف کو عالمی دہشت گردوں کی خصوصی فہرست میں شامل کر لیا ہے۔اس کے تحت ان پر سفری پابندیاں عاید کردی گئی ہیں اور امریکا میں اگر ان کے کوئی اثاثے ہیں، تو ان کو منجمد کر لیا جائے گا۔

امریکا کے اس اقدام کا مقصد داعش اور النصرۃ محاذ کو کو کمزور کرنا ہے۔داعش نے جون کے بعد عراق اور شام کے ایک وسیع علاقے پر قبضہ کرکے خلافت کے نام سے اپنی حکومت قائم کر رکھی ہے۔

امریکا سے قبل گذشتہ جمعہ کو اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل نے ابو محمد العدنانی کا نام دہشت گردوں کی فہرست میں شامل کرلیا تھا اور ان سمیت چھے جنگجوؤں پر پابندیاں عاید کر دی تھیں۔اس اقدام کے تحت اقوام متحدہ کے تمام رکن ممالک ان کے اثاثے منجمد کرنے،ان پر سفری اور اسلحے کے لین دین کی پابندی عاید کرنے کے پابند ہیں۔

محکمہ خارجہ نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ ''اس پابندی کے تحت کوئی بھی امریکی شہری ابو محمد العدنانی کے ساتھ کوئی لین دین نہیں کرسکے گا۔ان کی امریکا میں موجود جائیداد اور تمام اثاثے منجمد کر لیے گئے ہیں۔اگر ان کے امریکی افراد کے قبضے یا کنٹرول میں کوئی اثاثے موجود ہیں تو وہ بھی منجمد کر لیے جائیں گے۔امریکی محکمہ خزانہ نے الگ سے ایک حکم نامہ جاری کیا ہے جس کے تحت امریکی فرمیں اور افراد ان دونوں جنگجوؤں کے ساتھ کوئی لین دین نہیں کرسکیں گے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں