.

داعش ٹھکانوں پر کارروائیاں، امریکی اخراجات 7.5 ملین ڈالر یومیہ

کارروائیوں میں شدت آ رہی ہے :پینٹا گان ترجمان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

عراق میں داعش کے ٹھکانوں کو نشانہ بنانے کے لیے جاری امریکی فوجی آپریشنز کے حوالے سے پینٹا گان نے بتایا ہے کہ ان آپریشنز پر یومیہ ساڑھے سات ملین ڈالر کے اخراجات برداشت کرنا پڑ رہے ہیں۔

واضح رہے عراق کے دوسرے بڑے شہر موصل اور عراق کے شمالی علاقوں پر داعش کے قبضے کے ساتھ ہی امریکی صدر اوباما نے عراق میں امریکی سفارتکاروں اور شہریوں کی حفاظت کے علاوہ عراقی حکومت کی مشاورت کے لیے آٹھ سو پینسٹھ فوجیوں اور افسروں کی تعیناتی کر دی تھی۔

امریکی طیارے جن میں بغیر پائلٹ کے اڑائے جانے والے طیارے بھی شامل ہیں ، عراق میں اپنی کارروائیاں جاری رکھے ہوئے ہیں۔ آٹھ اگست سے اب تک امریکی جنگی طیارے ایک سو سے زائد فضائی کارروائیاں کر چکے ہیں۔ یہ کارروائیاں زیادہ تر داعش کے موصل ڈیم کے نزدیک ٹھکانوں پر کی گئی ہیں۔

تاہم پینٹا گان کے ترجمان رئیر ایڈمرل جان کربی کے مطابق امریکی اخراجات کا سلسلہ فی یوم ساڑھے سات ملین ڈالر ماہ جون سے جاری ہے۔ ترجم ن کا کہنا ہے کہ ان اخراجات میں آئے روز تبدیلی کا رجحان ہے کیوں کہ کارروائیاں شدت پکڑ رہی ہیں۔ واضح رہے امریکا کے آٹھ سو سے زائد افسروں اور فوجیوں میں سے تین سو کے قریب فوجی مشیران ہیں۔