.

القاعدہ چیف کی ویڈیو مصدقہ ہے: بھارتی انٹیلی جنس

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

بھارت کے خفیہ ادارے انٹیلی جنس بیورو نے القاعدہ کے سربراہ ڈاکٹر ایمن الظواہری کی بدھ کو منظرعام پر آنے والی ویڈیو کے مصدقہ ہونے کی تصدیق کردی ہے۔اس ویڈیو میں انھوں نے القاعدہ کے جنگجوؤں کی بھارت میں جہاد کی دھمکی دی ہے۔

بھارتی اخبار ٹائمز آف انڈیا کی رپورٹ کے مطابق وزارت داخلہ نے اس ویڈیو کے بعد ایک الرٹ جاری کیا ہے اور وزیرداخلہ راج ناتھ سنگھ نے اس خطرے سے نمٹنے کے لیے اعلیٰ سکیورٹی عہدے داروں سے ملاقات کی ہے۔

ڈاکٹر ایمن الظواہری نے بدھ کو جاری کردہ ویڈیو بیان میں برصغیر پاک وہند کے لیے اپنی تنظیم کی ایک نئی شاخ کے قیام کا اعلان کیا ہے۔جہادی اور دہشت گرد گروپوں کی آن لائن مانیٹرنگ کرنے والے امریکا میں قائم گروپ ''سائٹ'' کے مطابق جہادی فورمز پر پوسٹ کی گئی ایک ویڈیو میں ڈاکٹر ایمن الظواہری نے کہا ہے کہ ان کی نئی جنگجو تنظیم برما (میانمر) ،بنگلہ دیش اور بھارت کے کچھ حصوں میں مسلم خلافت کے قیام کے لیے کام کرے گی۔

ڈاکٹرالظواہری نے کہا ہے کہ ''قاعدات الجہاد کے نام سے ان کی نئی فورس خطے میں مسلم آبادی کو تقسیم کرنے والی مصنوعی سرحدوں کو مٹا دے گی اور القاعدہ کی یہ شاخ بھارت ،میانمر اور بنگلہ دیش میں لڑے گی''۔انھوں نے کہا کہ یہ تنظیم آج قائم نہیں کی گئی ہے بلکہ یہ برصغیر پاک وہند میں مجاہدین کو ایک جھنڈے تلے مجتمع کرنے کے لیے دو سال کی کوششوں کا ثمر ہے۔

انڈین ایکسپریس نے ماہرین کے حوالے سے لکھا ہے کہ بھارت میں جہاد کی یہ نئی مہم ایسے وقت میں شروع کی جارہی ہے ،جب دولت اسلامی (داعش) نے عراق اور شام کے وسیع علاقے پر قبضہ کر کے اپنی حکومت قائم کررکھی ہے۔اخبار کے مطابق القاعدہ کی اس نئی شاخ کا نام ''جماعت قاعدات الجہاد فی شبیہ القارۃ الہندیہ'' یا برصغیر پاک وہند میں جہاد کی بنیاد ہیں۔اس نے آن لائن ایک منشور بھی جاری کیا ہے جو ڈاکٹر ایمن الظواہری ،ترجمان اسامہ محمود اور تنظیمی سربراہ عاصم عمر نے لکھا ہے۔

گذشتہ سال عاصم عمر نے بھارتی مسلمانوں سے اپیل کی تھی کہ ''آپ نے ہندوستان میں آٹھ سو برس تک حکومت کی تھی ۔آپ نے کفر کے اندھیروں میں ایک سچے اللہ کا علم بلند کیا اور اب جبکہ تمام دنیا کے مسلمان بیدار ہورہے ہیں تو آپ کیسے خوابیدہ رہ سکتے ہیں''۔