.

اسامہ کی کلاشنکوف 9/11 کی برسی کی نمائش میں پیش

ایک اینٹ، میرین کی جیکٹ سمیت متعدد اشیاء نمائش میں رکھی گئی ہیں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

گیارہ ستمبر 2001ء کو امریکا میں ہونے والے دہشت گردی کے حملوں کی برسی کے آمد کے موقع پر امریکا میں ایک نئی گہما گہمی دیکھی جاتی ہے۔ امسال بھی امریکی انتظامیہ نائن الیون کے واقعات کو اپنے بھرپور جذباتی پن کے ساتھ منانے کا ارادہ رکھتی ہے لیکن اس بار القاعدہ کے مقتول بانی اسامہ بن لادن اور انہیں مبینہ طور پر قتل کرنے والے امریکی میرینز کے زیر استعمال سامان کی ایک نمائش کا بھی اہتمام کیا گیا ہے۔

نیوریاک کے علاقے 'مین ہٹن' کے مقام پر واقع عالمی تجارتی مرکز کے پہلو میں منعقدہ اس نمائش کو بھی نائن الیون کی مناسبت سے"قومی نمائش برائے نائن الیون" کا نام دیا گیا ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق نمائش میں مقتول القاعدہ رہنما اسامہ بن لادن کی ایک کلاشنکوف، ان کی مبینہ رہائش گاہ، جسے بعد ازاں پاکستانی حکام نے مسمار کردیا تھا، کی کچھ اینٹیں، آپریشن میں حصہ لینے والے چھ فوجیوں بالخصوص اسامہ پر تین گولیاں چلانے والے اہلکار کی جیکٹ، ایک ٹی شرٹ اور کچھ یادگاری سکے جو امریکی وفاقی تحقیقاتی ادارے"سی آئی اے" کے اہکار کے ہاتھ لگے تھے نمائش میں پیش کیے گئے ہیں۔

اس کے باوجود اسامہ کے قاتلوں، آپریشن میں حصہ لینے والوں اور 31 مئی 2010ء کی اگلی صبح اسامہ کی میت کو ایک تیز رفتار ہوائی جہاز کی مدد سے سمندر برد کرنے میں حصہ لینے والوں کی شناخت ہنوز صیغہ راز میں ہے۔

اتوار سے جاری اس نمائش میں اسامہ بن لادن کے پاکستانی گریژن سٹی ایبٹ آباد کی بلال کالونی میں واقع کمپاؤنڈ سے لائی گئی ایک اینٹ بھی پیش کی گئی۔ یہ اس اینٹ بات کا ثبوت ہے کہ کارروائی کے وقت مکان کا کچھ حصہ بھی گرا دیا گیا تھا۔ اس کے علاوہ اسامہ بن لادن کے بیڈ روم میں موجود الماری سے ان کی ایک شرٹ اور ایک کلاشنکوف جو اسامہ نے غالبا دفاع کے لیے اپنے پاس ہی رکھی ہوئی تھی، لیکن امریکی کمانڈوز نے اسامہ کو بندوق استعمال کرنے کا موقع نہیں دیا۔

نمائش کے منتظمین کا کہنا ہے کہ انہوں نے اسامہ بن لادن اور انہیں ہلاک کرنے والے فوجیوں کے سامان کی نمائش 11 ستمبر 2001ء کی 13 ویں برسی کے موقع پر اس لیے لگائی تاکہ نیویارک اور واشنگٹن میں دہشت گردی کے ہونے والے حملوں اور ان میں مارے جانے والوں کی یاد تازہ کی جا سکے۔ اس کے ساتھ ساتھ اس نمائش کا مقصد ان فوجی جوانوں کو خراج تحسین پیش کرنا جنہوں ‌نے اپنی جانوں پر کھیل کر دنیا کے نہایت خطرناک اشتہاری کو ہمیشہ کی نیند سلا دیا۔

نمائش کے منتظم گوڈانیالز کا کہنا ہے کہ "نائن الیون واقعات کی نمائش" امریکی تاریخ کے اہم واقعات کی عکاسی کرتی ہے۔ نمائش کو لاکھوں افراد وزٹ کر رہے ہیں۔ آنے والے جہاں دہشت گردی کے واقعات کو یاد کرتے ہیں وہیں دفاع قوم وطن کے لیے اندرون اور بیرون ملک قربانیاں دینے والی امریکی کی جرات، بہادری اور ان کی قربانیوں سے آگاہی حاصل کرتے ہیں۔