موریتانیہ میں جمعہ کی ہفتہ وار تعطیل منسوخی کا فیصلہ مسترد

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

براعظم افریقہ کے مسلمان ملک موریتانیہ کے علماء اور مذہبی حلقوں نے حکومت کی جانب سے ہفتہ وار تعطیلات جمعہ اور ہفتہ کے بجائے ہفتے اور اتوار کے روز کرنے کے فیصلے کی سخت مخالفت کی ہے۔ گذشتہ جمعہ کے اجتماعات میں علماء نے حکومت پر جمعہ کی تعطیل ختم کرنے پر کڑی تنقید کی اور مطالبہ کیا کہ ہفتہ تعطیلات میں جمعہ کی چھٹی بحال رکھی جائے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق دارالحکومت نواکشوط کی تمام بڑی مساجد کے ائمہ اور خطباء نے جمعہ کی تعطیل ختم کرنے کی شدید مذمت کی۔ علماء نے جہاں جمعہ کے فضائل بیان کیے وہیں حکومت پر زور دیا کہ وہ جمعہ کی چھٹی کو برقرار رکھے۔

رپورٹ کے مطابق حال ہی میں نواکشوط حکومت نے یکم اکتوبر سے ہفتہ وار تعطیلات جمعہ اور ہفتہ کے بجائے ہفتہ اور اتوار کو کرنے کا اعلان کیا تھا۔ اس فیصلے کی حمایت اور مخالفت میں اخبارات میں بھی ایک بحث چل پڑی ہے جبکہ سوشل میڈیا میں بھی تند وتیز تبصرے جاری ہیں۔ سوشل میڈیا پر حکومتی فیصلے کی غیر معمولی سطح پر مخالفت دیکھی جا رہی ہے۔

موریتانیہ کے ایک سرکردہ عالم دین اور روحانی پیشوا الشیخ محمد الحسن ولد الددو نے دارالحکومت نواکشوط میں جامع مسجد ابو طلحہ میں جمعہ کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ جمعہ کا دن مسلمانوں کے لیے بہ منزلہ 'عید' ہے اور عید کے روز چھٹی کی جاتی ہے۔ اس لیے جمعہ کے روز کی تعطیل کو کسی دوسرے دن کی تعطیل میں تبدیل کرنے کا کوئی جواز نہیں ہے۔ ہم حکومت کے اس فیصلے کو تسلیم نہیں کرتے ہیں اور نہ ہی اسے نافذ ہونے دیں گے۔

موریتانیہ کی پارلیمنٹ میں شامل مذہبی جماعت"تواصل" کے رہ نما محمد غلام ولد الحاج الشیخ نے بھی جمعہ کی تعطیل کو اتوار کے روز میں تبدیل کرنے کی مخالفت کی۔ انہوں نے کہا کہ جمعہ کی تعطیل صدیوں پرانی اسلامی روایت ہے جواب موریتانیہ کی آزادی، استحکام اور اس کی ثقافت کی علامت بن چکی ہے۔

موریتانیہ میں نیشنل لیبر یونین کی جانب سے بھی جمعہ کی تعطیل ختم کرنے کے حکومتی اعلان کو مسترد کر دیا گیا ہے۔ یونین کی جانب سے جاری ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ جمعہ کی تعطیل کو منسوخ کرنے کی قانون اجازت دیتا ہے اور نہ ہی یہ اقدام ہماری سماجی اور دینی روایات کے مطابق ہے۔ اس لیے اس فیصلے کے نفاذ کی کوئی قانونی توجیح پیش نہیں کی جا سکتی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں