.

داعش: برطانوی صحافی کی ویڈیو جاری

یرغمالی کا جنگجو گروپ سے متعلق حقائق سامنے لانے کا وعدہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

حالیہ ہفتوں کے دوران دو امریکی صحافیوں اور ایک برطانوی شہری کے آن کیمرا سرقلم کرکے عالمگیر بدنامی مول لینے والے جنگجو گروپ دولت اسلامی عراق وشام (داعش) نے جمعرات کو ایک اور یرغمال برطانوی صحافی کی ویڈیو جاری کی ہے۔

یوٹیوب پر پوسٹ کی گئی ویڈیو میں نمودار ہونے والے صحافی کانام جان کینٹلئی ہے۔اس نے بھی پہلے بے دردی سے قتل کیے گئے مغربی یرغمالیوں کی طرح مالٹائی رنگ کا جمپ سوٹ پہن رکھا ہے۔ وہ نیوز رپورٹ کے انداز میں کیمرے کے سامنے بول رہا ہے اور کَہ رہا ہے کہ وہ اس جہادی گروپ کے بارے میں ''سچ'' کا انکشاف کرے گا۔

داعش نے گذشتہ ہفتے کے روز چوالیس سالہ برطانوی شہری ڈیوڈ ہینز کے قتل کی ویڈیو جاری کی تھی جس میں لندن کے لب ولہجے میں انگریزی بولنے والا نقاب پوش سفاک جنگجو اس کا سرقلم کررہا ہے۔اس ویڈیو کا عنوان ''امریکا کے اتحادیوں کے لیے ایک پیغام''تھا۔

اس ویڈیو کے آخر میں نقاب پوش نے ایک اور برطانوی شہری ایلن ہیننگ کو بھی دکھایا تھا اور اس نے دھمکی دی تھی کہ اگر ڈیوڈ کیمرون نے داعش کے خلاف عراق اور کرد سکیورٹی فورسز کی حمایت جاری رکھی ہے تو اس کو بھی اسی انداز میں قتل کردیا جائے گا۔درایں اثناء برطانیہ کی مسلم تنظیموں نے داعش کے خلیفہ ابوبکر البغدادی سے ایلن ہیننگ کی جان بخشی کی اپیل کی ہے اور ان سے کہا ہے کہ اس کو بحفاظت رہا کردیا جائے۔