یمن: حوثی باغیوں اور سکیورٹی فورسز میں جھڑپیں ،38 ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

یمن کے دارالحکومت صنعا کے نواحی علاقے میں حکومت کے خلاف احتجاج کرنے والے حوثی شیعہ باغیوں اور سکیورٹی فورسز کے درمیان جھڑپیں ہوئی ہیں جن کے نتیجے میں اڑتیس افراد ہلاک ہوگئے ہیں۔

یمنی حکام کے مطابق جمعرات کو صنعا کے نواحی علاقے شاملان میں سکیورٹی فورسز اور حوثی باغیوں کے درمیان جھڑپیں ہوئی ہیں جس کے بعد ہزاروں افراد اپنا گھربار چھوڑنے پر مجبور ہوگئے ہیں۔حوثی باغیوں اور ان کی متحارب ملیشیاؤں کے درمیان صنعا کے دوسرے نواحی علاقوں میں جھڑپیں ہوئی ہیں۔انھوں نے اہلِ سنت کے زیرانتظام ایک یونیورسٹی ''جامعہ ایمان'' کا بھی محاصرہ کر رکھا ہے۔

یمنی حکام کے مطابق گذشتہ اڑتالیس گھنٹے کے دوران جھڑپوں میں ساٹھ افراد ہلاک ہوچکے ہیں۔ حوثیوں نے حالیہ مہینوں کے دوران دارالحکومت صنعا کے شمال میں واقع بہت سے علاقوں پر قبضہ کر لیا ہے اور وہاں سے اپنے مخالفین کو شکست سے دوچار کرنے کے بعد نکال باہر کیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں