اردن: ماجدہ مزاح کے میدان میں مردوں کو ایک چیلنج

سکارف اوڑھنے والی ماجدہ اس شعبے کی پہلی اردنی خاتون ہے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

اردن مزاح کے شعبے سے تعلق رکھنے والی اور مزاحیہ کردار کی حامل افسانوی طرز کی ہیروئن ماجدہ مردوں کے غلبے کو چیلنج کرنے والی شخصیت کے طور پر سامنے آئی ہیں۔

اس کی ڈائری ''یامیات ماجدہ'' مزاح کے شعے میں آزاد اردنی خواتین کی مضبوط آواز کے طور پر نمائندگی کا ذریعہ بن رہی ہے۔ وقت کے ساتھ ساتھ وہ اردن میں وہ ایک آہنی طرز کی خاتون کے طور پر ابھر رہی ہے۔

وہ حاضر جواب اور بذلہ سنج بھی ہے۔ ماجدہ سکارف اوڑھتی ہےلیکن منہ کو کھلا رکھتی ہے۔ اسے بے شمار مزاحیہ محاورے یاد ہیں وہ بات کرتے ہوئے ان عام سطح کے محاوروں اور ضرب المثال کو خوب اور برمحل استعمال کرتی ہے۔

ماجدہ کی والدہ اس کی یونیورسٹی کی تعلیم کے حوالے سے بھی حوصلہ افزائی اور اس کی مدد کرتی ہیں لیکن وہ اپنی ہونہار بیٹی کے ضدی ہونے کی شکایت بھی کرتی ہیں۔

ماجدہ کی ڈائریوں میں مختلف سماجی موضوعات کا احاطہ کرتی ہے۔ اردنی خواتین کے لیے اس کی ڈائری میں کافی دلچسپی کا مواد موجود ہوتا ہے۔

ماجدہ ایک طرح سے پہلے مزاحیہ کردار کے ساتھ سامنے آنے والی خاتون ہے ، اس سے پہلے مردوں میں ابو محجوب بھی ایک بھرپور مزاحیہ شخصیت کے طور پر معروف ہے۔

اردنی معاشرے میں عورتوں کے لیے بالعموم غیر ثانوی نوعیت کے، جذباتی اور غیر حقیقت پسندانہ کردار پسند کیے جاتے ہیں۔ لیکن اب ماجدہ نے مردوں کے اس غلبے کو چیلنج کر دیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں