.

فرانس: داعش کے لیے بھرتی، بہن، بھائی پر فرد الزام

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

فرانس میں حکام نے دولتِ اسلامی عراق وشام (داعش) کے لیے ممکنہ خواتین جنگجوؤں کو بھرتی کرنے کے الزام میں ایک بہن بھائی سمیت پانچ افراد کے خلاف ابتدائی فرد الزام عاید کر دی ہے۔

ایک عدالتی عہدے دار نے اتوار کو بتایا ہے کہ ان پانچوں مشتبہ افراد کو منگل اور بدھ کو فرانس کے وسطی علاقے ووکس این ویلن سے گرفتار کیا گیا تھا اور وہ اس وقت زیر حراست ہیں۔

ان افراد کی گرفتاریاں فرانس کے مختلف علاقوں میں حال ہی میں ترکی جانے کی کوشش کے الزام میں پکڑی گئی نوجوان لڑکیوں سے ملنے والی اطلاعات کی روشنی میں عمل میں آئی ہیں۔ان میں ایک سولہ سالہ لڑکی بھی شامل تھی جو نائس کے ہوائی اڈے پر ترکی جانے کی تیاریوں میں تھی اور وہیں دھر لی گئی تھی۔وہ ترکی سے شام جانا چاہتی تھی۔

ان کے علاوہ تین اور دوشیزاؤں کو گرفتار کیا گیا تھا۔انھیں سوشل نیٹ ورکنگ کی سائٹس کے ذریعے ترکی کے راستے شام جانے کے لیے ورغلایا گیا تھا۔فرانسیسی حکومت ملک سے عراق اور شام میں لڑائی کے لیے جانے والے افراد کو روکنے کی غرض سے سخت اقدامات کررہی ہے اور وہ مشتبہ جنگجوؤں کے پاسپورٹس ضبط کرنے کا بھی جائزہ لے رہی ہے۔