.

داعش مخالف کارروائیاں، آسٹریلوی جنگی طیارے بھی شامل ہو گئے

عراق کی طرف سے مدد کے لیے جلد باضابطہ درخواست کی توقع

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

آسٹریلیا کی ائیر فورس نے عراق میں داعش کے خلاف پہلی کارروائی مکمل کر لی ہے۔ آسٹریلوی وزارت دفاع نے بتایا ہے کہ اس کارروائی میں پیشگی خبردار کرنے والے طیاروں کے علاوہ ایندھن بھرنے والے طیارے شامل تھے۔

وزارت دفاع کے مطابق دونوں طیارے محفوظ واپس پہنچ گئے ہیں۔ یہ طیارے متحدہ عرب امارات کے فوجی اڈے سے اڑے تھے۔

آسٹریلیا کے وزیر خارجہ جیولی بشپ کے مطابق عراقی حکومت کی طرف سے ابھی آسٹریلیا کو باضابطہ درخواست ملنا باقی ہے۔ وزیر خارجہ کا کہنا تھا ایسی درخواست آنے پر کابینہ اور قومی سلامتی کمیٹی اس پر غور کرے گی۔

واضح رہے آسٹریلیا کے چھ ایف اٹھارہ سپر ہارنیٹ جیٹ فائٹر متحدہ عرب امارات میں پہلے سے اس مقصد کے لیے تیار کھڑے ہیں، تاہم اس سلسلے میں آسٹریلیا اور عراق حکومت کی حتمی منظوری ابھی ملنا ہے۔

آسٹریلیا کے لیے عراقی سفیر موئید صالح نے آسٹریلیا کی طرف سے اس پہلی کارروائی کا خیر مقدم کیا ہے۔ سفیر کے مطابق عراق کی طرف سے درخواست آج جمعرات کے روز سامنے آ سکتی ہے۔

ایک روز پہلے آسٹریلوی وزیر اعظم ٹونی ایبٹ نے کہا تھا '' آسٹریلیا امریکی قیادت میں داعش کے خلاف وجود میں عالمی اتحاد میں شامل ہو گا اور داعش کو فضائی کارروائیوں کا نشانہ بنائے گا۔''

خیال رہے آسٹریلیا کی سکیورٹی فورسز نے ملک کے اندر بھی ان دنوں داعش کے حامیوں اور ان کے لیے فنڈ ریزنگ کی کوشش کرنے والوں کے خلاف مہم شروع کر رکھی ہے۔