.

کینیا:جعلی اسرائیلی پاسپورٹس پر سفر، دو ایرانیوں کوسزا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

کینیا کی ایک عدالت نے دوایرانیوں کو اسرائیل کے جعلی پاسپورٹس پر سفر کے
جرم میں قصوروار قرار دے کر دو، دوسال قید کی سزا سنائی ہے۔جیل نہ جانے
کی صورت میں دونوں غیرملکیوں کو جرمانے کی شکل میں بھاری رقم ادا کرنا
ہوگی۔

کینیا کی انسداددہشت گردی پولیس نے 18 ستمبر کو ان دونوں افراد کو ملک
میں حملے کی سازش کے شُبے میں دارالحکومت نیروبی کے ہوائی اڈے پر گرفتار
کیا تھا۔وہ اس وقت ایک پرواز کے ذریعے بیلجیئم روانہ ہونے کی کوشش کررہے
تھے۔انھوں نے عدالت کے روبرو اسرائیل کے جعلی پاسپورٹس پر سفر کرنے کا
اعتراف کیا ہے۔

نیروبی کی ریزیڈینٹ میجسٹریٹ حنہ کاجرو نے اپنے حکم میں کہا ہے کہ قید یا
جرمانے کی سزا پوری ہونے کے بعد ان دونوں مجرموں کو کینیا کے محکمہ برائے
مہاجرین کے حوالے کردیا جائے۔وہ چودہ روز میں اس سزا کے خلاف اپیل دائر
کرسکتے ہیں۔

فوری طور پر یہ واضح نہیں ہوا کہ یہ دونوں ایرانی (مرد اور عورت) کس طرح
کا حملہ کرنے کی سازش کررہے تھے اور یہ بھی واضح نہیں ہوا کہ آیا وہ دو
سال کے لیے جیل جانے کے بجائے بیس، بیس لاکھ شلنگز جرمانہ دا کریں گے یا
نہیں۔

واضح رہے کہ کینیا کی ایک عدالت نے گذشتہ سال مئی میں دو ایرانی مردوں کو
نیروبی اور دوسرے شہروں میں بم حملوں کی منصوبہ بندی کے الزام میں قصور
وار قرار دے کرعمر قید کی سزا سنائی تھی۔ان دونوں نے اپنی سزاؤں کے خلاف
اپیل دائر کی تھی اور اس پر 14 اکتوبر کو فیصلہ متوقع ہے۔

گذشتہ سال ستمبر میں نیروبی کے ویسٹ گیٹ شاپنگ مال پر مسلح افراد کے حملے
کے بعد سے کینیا کی سکیورٹی ایجنسیاں ہائی الرٹ ہیں۔دستی بموں اور آتشیں
ہتھیاروں سے اس حملے میں سڑسٹھ افراد ہلاک ہوگئے تھے۔