.

تیونس: انتخابات میں سیکولر جماعت کا برتری کا دعوی

'ندائے تیونس' قبل از وقت بلند بانگ دعووں سے باز رہے: النہضہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

تیونس کی مرکزی سیکولر پارٹی ندائے تیونس نے ملک میں گذشتہ روز منعقد ہونے والے الیکشن میں ابتدائی برتری حاصل کر لینے کا اعلان کر دیا ہے۔ الیکشن کمیشن کے مطابق البتہ ابتدائی نتائج کا اعلان بدھ سے پہلے متوقع نہیں ہے۔

ندائے تیونس کے مطابق ان کی اپنی تحقیق سے ظاہر ہوتا ہے کہ وہ ان انتخابات میں کامیاب ہو گئی ہے تاہم اسلام پسند پارٹی النہضہ نے خبردار کیا ہے کہ ندائے وقت کو قبل از وقت کسی نتیجے پر نہیں پہنچنا چاہیے۔

الیکشن کمیشن کے مطابق ان پارلیمانی انتخابات میں ووٹ ڈالنے کی شرح ساٹھ فیصد رہی۔ اس شمالی افریقی ملک میں رجسٹرڈ ووٹرز کی تعداد 5.2 ملین ہے۔