امریکا میں دنیا کی مہنگی ترین طلاق

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

دنیا بھر میں روزمرہ کی بنیاد پر میاں بیوی میں علاحدگی اور طلاق کے ہزاروں واقعات رونما ہوتے ہیں مگر امریکا میں ہونے والی ایک طلاق معاصر تاریخ کی مہنگی ترین طلاق قرار دی گئی ہے جس میں مطلقہ کے سابقہ شوہر کو عدالت نے قریبا ایک ارب ڈالر کی رقم طلاق کی مد میں ادا کرنے کا حکم دیا ہے۔

فرانسیسی خبر رساں ایجنسی "اے ایف پی" کے مطابق حال ہی میں امریکا کی ایک عدالت نے امریکی آئل فرم"کانٹیننٹل ریسوریز" کے ڈائریکٹر ھارولڈ ھام کی مطلقہ بیوی کی طلاق کی درخواست پر فیصلہ سناتے ہوئے دونوں میں جدائی کا اعلان کیا اور ساتھ ہی سابق ہو جانے والے شوہر کو 994 ملین ڈالر ادا کرنے کا حکم دیا ہے۔

امریکی بزنس جریدے "فوربز" کے مطابق ارب پتی 68 سالہ ھارولڈ ھام کی آئل کمپنی کانٹیننٹل ریسورسز کے اثاثوں کی مالیت 14 ارب ڈالر سے زیادہ ہے۔ رواں سال جریدے نے امریکا کے 400امراء کی فہرست میں ھام کو 33 واں امیر ترین شخص قرار دیا تھا۔

امریکا کی جنوبی ریاست اوکلا ھوما کی ایک عدالت نے دو روز قبل جاری کردہ اپنے فیصلے میں ھارولڈ ھام کو حکم دیا کہ وہ اپنی مطلقہ بیوی 58 سالہ سون آن کو 995481852 ڈالرز مالیت کی رقم ادا کرے۔ رپورٹ کے مطابق ھارولڈ مطلقہ بیوی کو 22 ملین ڈالر کی رقم ادا کر چکا ہے، عدالت نے بقیہ رقم 20 جنوری 2015ء ادا کرنے کا حکم دیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں