.

القاعدہ کی یرغمال امریکی شہری ہلاک کرنے کی دھمکی

مطالبات تسلیم کرنے کے لئے اغوا کاروں نے تین دن کی ڈیڈ لائن دی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

جزیرہ العرب میں سرگرم القاعدہ نے دھمکی دی ہے کہ اگر واشنگٹن نے تین دن کے اندر اندر تنظیم کے مطالبات پورے نہ کئے تو وہ اپنے ہاں یرغمال امریکی شہری لوکی سمرز کو قتل کر دیں گے۔

یمن میں القاعدہ کی شاخ نے ایک ویڈیو جاری کی ہے جس میں 33 سالہ لوکی سمرز آن کیمرہ بیان دیتے ہوئے کہتا ہے کہ "مجھے ایک برس قبل دارلحکومت صنعاء سے اغوا کیا گیا۔ میری زندگی خطرے میں ہے، میری مدد کی جائے۔" سمرز برطانیہ میں پیدا ہوا تاہم وہ امریکی شہریت رکھتا ہے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق سمرز پیشے کے اعتبار سے صحافی ہے اور اسے گذشتہ برس ستمبر میں صنعاء سے اغوا کیا گیا۔

ویڈیو ہی میں القاعدہ کے نصر بن علی الانسی کو آن کیمرہ دھمکی دیتے ہوئے دیکھے اور سنا جا سکتا ہے کہ 'اگر امریکا نے تین دن کے اندر ہمارے مطالبات پورے نہ کئے تو لوکی سمرز کو ہلاک کر دیا جائے گا۔" ویڈیو پیغام میں القاعدہ کے مطالبات کے بارے میں کچھ معلوم نہیں ہو سکا۔ الانسی نے دھمکی آمیز لہجے میں کہا کہ "امریکا ہمیں اچھی طرح جانتا ہے اور اسے اس بات میں کوئی شک نہیں ہونا چاہئے کہ کسی گڑبڑ کی صورت میں ان کا یرغمال شہری بالیقین اپنے انجام کو پہنچ جائے گا۔"

واضح رہے کہ یمن، القاعدہ کے خلاف کارروائیوں میں امریکا کا سیاسی حلیف ہے۔ اسی وجہ سے صنعاء نے اپنی سرزمین پر القاعدہ کے ٹھکانے تباہ کرنے کے لئے امریکا کو ڈرون حملوں کی اجازت دے رکھی ہے۔ ادھر امریکا بھی یمن میں سرگرم القاعدہ کو خطرناک ترین تنظیم خیال کرتا ہے۔