.

مصر سے ترکی کا سفر سیکیورٹی کلیئرنس سے مشروط

اقدام کا مقصد دہشت گردوں کی بھرتی روکنا ہے: ترجمان وزارت داخلہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مصر نے سیکیورٹی اداروں کی کلیئرنس کے بغیر شہریوں کو ترکی کا سفر کرنے سے منع کر دیا ہے۔

ایک غیر ملکی خبر رساں ادارے نے وزارت داخلہ کے ترجمان ہانی عبدالطیف کے حوالے سے بتایا ہے کہ"یہ اقدام مصری شہریوں کو ترکی کے راستے شام اور عراق میں عسکریت پسند گروپوں میں شمولیت سے باز رکھنے کے لئے اٹھایا گیا ہے۔"

اس اقدام کے بعد ترکی روانگی کے خواہش مند اٹھارہ سے چالیس برس عمر کے مصری شہری وسطی قاہرہ میں سیکیورٹی کلیئرنس کے لئے درخواست دیں گے اور اس کی منظوری کے بعد بیرون ملک سفر کر سکیں گے۔

ایسوسی ایٹڈ پریس کے مطابق گذشتہ 24 گھنٹوں کے اندر کم از کم 200 افراد کو ترکی سفر سے روکا گیا ہے کیونکہ انہوں نے متعلقہ سیکیورٹی اداروں سے کلیئرنس حاصل نہیں کی تھی۔

عراق اور شام جانے کے خواہش مند مصریوں کے لئے بھی ایسی ہی پیشگی اجازت حاصل کرنا ضروری قرار دیا گیا ہے۔

یاد رہے جولائی 2013 میں اس وقت کے صدر ڈاکٹر محمد مرسی کی حکومت خاتمے کے بعد سے مصر اور ترکی کے درمیان تعلقات بگاڑ کا شکار چلے آ رہے ہیں۔