.

فرانس میں تشدد کا تازہ واقعہ، کار نے خاتون پولیس اہلکار کچل ڈالی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

فرانس میں ایک ہفتہ قبل دہشت گردی کے متعدد واقعات کی بازگشت ابھی ختم نہیں ہوئی کہ اس دوران تشدد کا ایک تازہ واقعہ بھی پیش آیا ہے۔ خبر رساں اداروں کے مطابق سیکیورٹی کے حوالے سے نہایت حساس علاقے میں شاہی محل’’ایلیزیہ‘‘ کے سامنے مشتبہ کار سواروں نے کار کی ٹکر مار کر ایک خاتون پولیس اہلکار کو زخمی کر دیا۔

خبر رساں ایجنسی’’اے ایف پی‘‘ کے مطابق تازہ پرتشدد واقعہ بدھ اور جمعرات کی درمیانی شب فرانس کے ایوان صدر، وزیراعظم ہائس اور پارلیمنٹ ہائس کے سامنے شاہراہ شانزیلیہ پر پیش آیا۔

پولیس ذرائع کے مطابق رات گئے ایک سیاہ رنگ کی رینوکلیو کار شاہراہ ’’دوراس‘‘ اور ’’فائوب برگ سینٹ ہانر‘‘ کو ملانے والے چوک کے قریب مخالف سمت میں جا رہی تھی۔ سڑک کے کنارے ایک خاتون پولیس اہلکار اپنی ڈیوٹی پر مامور تھی۔ اس دوران اس نے کار کو رُکنے کا اشارہ کیا تاہم ڈرائیور نے کار تیزی سے بھگاتے ہوئے پولیس اہلکار کو بھی کچل ڈالا۔ کار کی ٹکر سے خاتون کو درمیانے درجے زخم آئے ہیں۔ جب یہ واقعہ پیش آیا اس وقت کار میں چار افراد سوار تھے۔ بعد ازاں وہ کار سے اتر کرپیدل بھاگ رہے تھے۔ پولیس نے پیچھا کرکے ان میں سے دو کوحراست میں لے لیا ہے تاہم ان کی شناخت ظاہر نہیں کی گئی ہے۔ فرانسیسی میڈیا کے مطابق زخمی خاتون پولیس اہلکار کا اسپتال میں علاج جاری ہے۔