جدہ: ایرانی لڑکیوں کو ہراساں کرنے والوں کے خلاف کارروائی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سعودی وزارت داخلہ کے ترجمان کا کہنا ہے کہ جدہ کے شاہ عبدالعزیز انٹرنیشنل ائیرپورٹ پر ایرانی معتمرین کے ایک گروپ کو جنسی طور پر ہراساں کرنے کے الزام میں ائیرپورٹ عملے کے متعدد ارکان کو حراست میں لے لیا گیا ہے۔

وزارت داخلہ کے ترجمان میجر جنرل منصور الترکی نے بتایا ہے کہ سعودی حکام نے دو ایرانی لڑکیوں کو جدہ ائیرپورٹ پر جنسی طور پر ہراساں کرنے کا الزام سامنے آنے کے بعد تحقیقات کا آغاز کردیا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ مملکت کے قانون کے تحت ایسے جرائم کے مرتکب افراد کو سخت سے سخت سزا دی جاتی ہے اور ان جرائم کی سعودی مسلم معاشرے کے ہر شعبے میں مذمت کی جاتی ہے۔ملزمان کو تحقیقات کے لیے حراست میں لے لیا گیا ہے۔اس سلسلے میں ضروری اقدامات کیے جارہے ہیں اور ایران کے سفیر کو بھی اس سے متعلق آگاہ کردیا گیا ہے۔

ایران کے وزیر ثقافت نے پیر کے روز کہا تھا کہ ان کے ملک نے سعودی عرب میں مقدس مقامات پر ایرانی زائرین کو بھیجنے کا سلسلہ مجرمان کو سزا ملنے تک بند کردیا ہے۔ایرانی میڈیا کے مطابق یہ واقعہ اس وقت پیش آیا جب ایرانی لڑکیاں مکہ مکرمہ اور مدینہ منورہ میں زیارت کے بعد واپس جانے کے لیے روانہ ہو رہی تھیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں