.

پمفلٹس کے ذریعے یمنی شہریوں کو ایرانی توسیع پسندی کی وارننگ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن میں سعودی عرب کی جانب سے حوثی باغیوں کے خلاف جاری فوجی آپریشن "فیصلہ کن طوفان" میں جنگی طیاروں کے ذریعے بعض شہروں میں پمفلٹس بھی گرائے گئے ہیں جن میں یمنی شہریوں کوبتایا گیا ہے کہ ایران حوثیوں کی مدد کر کے یمن پر اپنی گرفت مضبوط کرنا چاہتا ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق جنگی طیاروں کی مدد سے گرائے گئے پمفلٹس میں کہا گیا ہے کہ سعودی عرب کی قیادت میں حوثیوں اور سابق صدرعلی صالح کے وفاداروں کے خلاف جاری فوجی آپریشن یمن کی سلامتی اور ملک کی وحدت کی خاطر ہو رہا ہے۔ اس آپریشن کا مقصد ایران نواز حوثیوں اور حکومت مخالف سابق صدر علی صالح کی توسیع پسندی کو روکنا ہے۔

پمفلٹس میں یمنی شہریوں سے اپیل کی گئی ہے کہ وہ موجودہ فوجی آپریشن میں حوثی باغیوں کے خلاف عالمی اتحاد کی مدد کریں اور حوثیوں کی غیرآئینی حکومت کے ساتھ تعاون سے گریز کیں تاکہ حوثیوں پر اندرون اور بیرون ملک سے دبائو ڈال کرانہیں ہتھیار ڈالنے پر مجبور کیا جاسکے۔

جنگی طیاروں کے ذریعے یمنی شہروں میں گرائے گئے اشتہارات میں خبردار کیا گیا ہے کہ حوثی شہریوں کو دھوکہ دہی کے ذریعے اپنے ساتھ ملانے کی کوشش کرسکتے ہیں۔ اس لیے شہریوں کو حوثی باغیوں کی مدد کے بجائے ملک کی آئینی حکومت کی کھل کر حمایت کرنا ہوگی۔