.

نیوزی لینڈ کے وزیراعظم کی شاہ سلمان سے ملاقات

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کے فرمانروا شاہ سلمان بن عبدالعزیز سے نیوزی لینڈ کے وزیراعظم جان کے نے الریاض میں بدھ کو ملاقات کی ہے اور ان سے دونوں ملکوں کے درمیان دوطرفہ تعلقات پر تبادلہ خیال کیا ہے۔

سعودی عرب کی سرکاری خبررساں ایجنسی ایس پی اے کی رپورٹ کے مطابق دونوں لیڈروں نے مختلف شعبوں میں دوطرفہ تعلقات بڑھانے کے علاوہ علاقائی اور عالمی سطح پر ہونے والے تازہ پیش رفت کے حوالے سے بات چیت کی ہے۔

مسٹر جان کے سعودی عرب کا دورہ کرنے والے نیوزی لینڈ کے پہلے سربراہ ریاست ہیں۔شاہ سلمان سے ان کی ملاقات میں ان کے وفد کے ارکان بھی موجود تھے۔انھوں نے دورے سے قبل العربیہ نیوز کے ساتھ ایک خصوصی انٹرویو میں سعودی عرب کو ایک اہم ملک قرار دیا تھا۔

ان سے جب پوچھا گیا کہ نیوزی لینڈ کے عہدے دار ماضی قریب میں سعودی عرب کے دورے پر کیوں نہیں آتے رہے ہیں تو ان کا کہنا تھا کہ یہ سفارتی ورثے کا نتیجہ تھا۔انھوں نے بتایا کہ انھوں نے سنہ 2010ء میں سعودی عرب کے دورے پر آنا تھا لیکن ایک فوجی طیارے کے حادثے کے بعد یہ دورہ منسوخ کردیا گیا تھا۔

جان کے نے مزید بتایا کہ ''نیوزی لینڈ کی تاریخی طور پر توجہ روایتی مارکیٹوں پر مرکوز رہی ہے اور 1970ء کے عشرے سے قبل تک وہ اپنی مصنوعات برطانیہ کو فروخت کرتا رہا ہے۔اس نے حال ہی میں ایشیائی ممالک کے ساتھ مضبوط تعلقات استوار کیے ہیں اور خلیج تعاون کونسل (جی سی سی) کے رکن ممالک اس کی پانچویں بڑی تجارتی مارکیٹ بن گئے ہیں''۔

انٹرویو میں ان کا مزید کہنا تھا کہ ''سعودی عرب کا دورہ سابقہ وزرائے اعظم کے نزدیک میری طرح ترجیح نہیں رہا تھا۔ہم تاریخی طور پر یہ دورہ بہت پہلے کرنا چاہتے تھے لیکن اس کی منسوخی کے بعد اس کے دوبارہ انتظام میں کچھ وقت لگ گیا ہے۔ہمارے لیے یہ ایک شاندار موقع ہوگا''۔