.

یو اے ای کا یمن میں آئینی حکومت کی بحالی کی مساعی جاری رکھنے کا عزم

یمن کے نائب صدرکی اماراتی ولی عہد سے ملاقات

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

متحدہ عرب امارات نے یمن میں سعودی عرب کی زیر قیادت آئینی حکومت کی بحالی کے لیے جاری عسکری اور سفارتی مساعی میں ہر ممکن تعاون کرنے کے عزم کا اعادہ کیا ہے۔ متحدہ امارات کے ولی عہد الشیخ محمد بن زاید آل نھیان کا کہنا ہے کہ یمن کی وحدت، سیاسی استحکام اور امن وامان ان کی اولین ترجیح ہے جس کے لیے ابوظہبی ہر تمام تر کوششیں جاری رکھے گا۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق اماراتی ولی عہد الشیخ محمد زید آل نھیان سے یمن کے نائب صدر اور وزیراعظم خالد محفوظ بحاح نے ان کے دفتر میں ملاقات کی۔ اس موقع پر ولی عہد محمد بن زاید نے خطے کے ممالک بالخصوص خلیجی ممالک کو درپیش اندرونی اور بیرونی خطرات کے تدارک کے لیے سعودی فرمانروا شاہ سلمان بن عبدالعزیز کی مساعی کا خیر مقدم کیا۔ انہوں نے کہا کہ شاہ سلمان بن عبدالعزیز کا خطے میں امن وامان کے قیام، علاقائی ممالک کی داخلی سلامتی اور خود مختاری کے لیے کردار قابل تحسین ہے۔

اس موقع پر یمنی نائب صدر نے اماراتی صدر الشیخ خلیفہ بن زید آل نھیان کے نام صدرعبد ربہ منصور ھادی کا خصوصی پیغام بھی پہنچایا جس میں صدر ھادی نے یمن میں آئینی حکومت کی بحالی کے لیے متحدہ عرب امارات کی مساعی کا خصوصی شکریہ ادا کیا۔ یمنی نائب صدر خالد بحاح نے اماراتی ولی عہد کو یمن کی موجودہ صورت حال کے بارے میں تفصیلی بریفنگ دی۔

انہوں نے کہا کہ یمن میں بحران کے حل کا وحد راستہ آئینی حکومت کی بحالی اور خلیجی ممالک کے تیار کردہ فریم ورک کے مطابق نمائندہ حکومت کا قیام ہے۔ ہم برادر عرب ممالک کے ساتھ مل کریمن کے استحکام، وحدت اورآئین کی بالادستی کی کوشش کررہے ہیں۔ اس سلسلے میں عرب ممالک کے تعاون کے خصوصی طورپر شکر گزار ہیں۔