شاہ سلمان:یمن امدادی مرکز کے لیے ایک ارب ریال مختص

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کے فرمانروا شاہ سلمان بن عبدالعزیز نے یمن کے لیے امدادی رقم بڑھا کر دُگنا کرنے اورمملکت میں یمن امدادی مرکز کے قیام کے لیے ایک ارب ریال مختص کرنے کا اعلان کیا ہے۔

یہ خطیر رقم ماضی میں یمن میں امدادی سرگرمیوں کے لیے اعلان کردہ رقم کے علاوہ ہوگی۔ سعودی عرب نے گذشتہ ہفتے خلیج تعاون کونسل کے سربراہ اجلاس کے موقع پر یمن میں امدادی سرگرمیوں کو مربوط بنانے کے لیے ایک مرکز کے قیام کا اعلان کیا تھا۔

سعودی عرب کی سرکاری خبررساں ایجنسی ایس پی اے کے مطابق شاہ سلمان نے بدھ کو ایک بیان میں کہا ہے کہ ''ہم امداد اور انسانی امدادی کارروائیوں کے لیے ایک ارب ریال (26 کروڑ 60 لاکھ ڈالرز) کی رقم مختص کرنے کا اعلان کرتے ہیں۔یہ پہلے سے یمن کے لیے وعدہ کی گئی ایک ارب ریال سے زیادہ رقم (27 کروڑ 40 ڈالرز) کے علاوہ ہوگی''۔

واضح رہے کہ سعودی عرب نے 18 اپریل کو اقوام متحدہ کی جانب سے یمن میں جنگ سے متاثرہ افراد کے لیے ہنگامی امداد کی اپیل پر تمام رقم 27 کروڑ 40 ڈالرز مہیا کرنے کا وعدہ کیا تھا۔

اقوام متحدہ کا کہنا تھا کہ اس رقم سے یمن میں جنگ سے متاثرہ پچھہتر لاکھ افراد کو ضروریات زندگی اور تحفظ مہیا کرنے پر صرف کی جائے گی۔اقوام متحدہ کی امدادی ایجنسی کے ترجمان جینز لائرک نے منگل کو ایک بیان میں کہا تھا کہ اس رقم سے جن منصوبوں کو عملی جامہ پہنایا جائے گا،ان کی نشان دہی کر لی گئی ہے۔تاہم ابھی یہ وعدہ ایفاء نہیں ہوا ہے اور عالمی ادارے کو سعودی عرب کی جانب سے رقم موصول نہیں ہوئی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں