.

مصرکی 8 مشکوک خواتین کو ترکی سفر سے روک دیا گیا

خواتین پر داعش میں شمولیت کا شبہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مصری حکام نے آٹھ مشتبہ خواتین کو ممکنہ طور پر شدت پسند تنظیم دولت اسلامیہ "داعش" میں شمولیت کے شبے میں ترکی کے سفر سے روک دیا ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق مصری حکام نے جمعہ کے روز ترکی کے سفر پر روانہ ہونے والے آٹھ خواتین کو سفر سے روک دیا۔ ان پر شبہ ہے کہ وہ ترکی کے راستے شام میں "داعش" میں شامل ہونے کی غرض سے سفر کرنا چاہتی ہیں۔ بیرون ملک سفر سے روکی گئی خواتین کی عمریں 18 سے 40 سال کے درمیان بتائی جاتی ہیں۔

مصری سیکیورٹی ذارئع نے بتایا کہ قاہرہ ہوائی اڈے کے ایمی گریشن حکام کی جانب سے انہیں بتایا گیا کہ متعلقہ سیکیورٹی حکام نے اٹھارہ سے چالیس سالی کی چند خواتین کو ترکی جانے والے ایک ہوائی جہاز پر سوار ہونے سے روک دیا ہے۔ ایمی گریشن حکام کی جانب سے کہا گیا کہ پولیس ان مشکوک خواتین کے بارے میں چھان بین کرے اور بتائے کہ آیا نہیں بیرون ملک سفر کی اجازت دی جائے یا نہیں، کیونکہ شبہ ہے کہ یہ خواتین ترکی کے راستے شام میں داعش میں شمولیت کی غرض سےسفر کرنا چاہتی ہیں۔