.

عریاں فلموں کی اداکارہ سویڈش شہزادے کی شریک حیات!

شادی کی تقریب میں شامی نژاد موسیقار کی سحر انگیز پرفارمنس

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سویڈن کے شہزادہ کارل فیلپ سابقہ فیشن ماڈل اور ریئلٹی شوکی ایک سپراسٹار ماڈل صوفیہ ہیلک وسٹ باہم رشتہ ازدواج میں منسلک ہوگئے ہیں۔ اسٹاک ہوم میں منعقدہ شادی کی تقریب کئی حوالوں سے خاصی دلچسپ رہی مگر شادی کی ایک اہم بات یہ تھی ایک شامی نژاد موسیقار سالم الفقیرنے اس موقع پراپنی سریلی دھنوں کا جادو جگا کر شرکاء پر سحر طاری کردیا تھا۔ سالم الفقیر کے کئی عالمی شہرت کے حامل انگریزی گانوں کے البم منظرعام پرآچکے ہیں۔ اس کی یہی شہرت اسٹاک ہوم کے شاہی محل تک کھینچ لائی۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ نے شہزادہ فیلپ اور صوفیہ کی شادی کی تفصیلات جاری کی ہیں۔ ماضی کی سپر اسٹار اور متنازعہ تصاویرکی اشاعت کی وجہ سے شہرت حاصل کرنے والی ماڈل صوفیہ ہیلک وسٹ اپنی نیم برہنہ تصاویر کی وجہ سے عالمی میڈیا کی توجہ کا بھی مرکز رہی ہیں۔

شہزادہ کارل فیلپ شاہ سویڈن کارل گوسٹائو کے ملکہ سیلیفا کے بطن سے دوسرے بیٹے ہیں۔ سنہ 2010 کے بعد سے شاہی خاندان میں یہ تیسری شادی ہے۔اس سے قبل شہزادہ فیلپ کی ہمیشرہ اور مستقبل کی ملکہ ویکٹوریا 2010ء میں رشتہ ازدواج میں منسلک ہوئی تھیں جب کہ اس کی چھوٹی بہن میڈلین کی شادی 2013ء میں انجام پائی تھی۔

شادی کی تقریب کو چار چاند لگانے والے شامی نژاد موسیقار کا تذکرہ بھی ضروری ہے کیونکہ شاہی خاندان نے اس اہم تقریب میں اسے اپنے فن کا مظاہرہ کرنے کا اعزاز بخشا ہے۔ سالم الففیر کے والد نبیل الفقیر شامی نژاد جبکہ والدہ انغر سویڈش ہیں۔ وہ 1981ء میں سویڈن ہی میں پیدا ہوئے۔ سالم کے انگریزی گانوں کے کئی البم منظرعام پرآچکے ہیں۔ سنہ 2007ء میں اس کا یہ گانا "This Is Who I Am" بہت ہٹ ہوا۔ گذشتہ روز شادی کی تقریب میں بھی اس نے خوبصورتی سے براہ راست بجایا جسے سرکاری ٹی وی پر براہ راست نشر کیا گیا۔ شادی کی تقریب میں شریک اہم عالمی شخصیات اور شاہی خاندان نے تالیوں کی گونج سے سالم الففیر کے فن کی داد دی۔

سالم نے تین سال کی عمرمیں وائلین بجانا سیکھ لیا تھا جس کے بعد اس نے کم عمر ہی میں پیانو میں بھی مہارت حاصل کرلی تھی۔ سالم کے کل چھ بہن بھائی ہیں۔ ان میں امینہ، ایمن، نسیم، سالم، سامی اور فارس کے نام ملے ہیں۔ ان میں سے ایک بھائی 38 سالہ نسیم سویڈن میں ایک مشہور موسیقار اور کومیڈین بھی ہیں جو SVT نامی ٹی وی پر اپنا پروگرام پیش کرتے ہیں۔ اس ٹی وی چینل نے بھی شہزادہ فیلپ کی شادی کو براہ راست نشر کیا۔

صوفیہ کی متنازعہ تصاویر

شہزادہ کارل فیلپ کی صوفیہ ہیلک وسٹ کے ساتھ شادی اس حوالے سے منفرد ہے کہ صوفیہ پہلی خاتون ہیں جو سویڈش شاہی خاندان کے باہر سے شہزادی بنی ہیں۔ شہزادی صوفیہ عمر میں شہزادہ فیلپ سے پانچ سال چھوٹی ہیں مگران کی وجہ شہرت ماضی میں ایک متنازعہ اداکار کے طورپر رہی ہے۔ اگرچہ اب انہوں نے طرز زندگی تبدیل بھی کرلیا ہے۔ 20 سال کی عمر میں صوفیہ ہیلک وسٹ کی برہنہ تصاویر Slitz نامی جریدے کے سرورق پر شائع ہوئی تھیں جن میں اس نے ایک اژدھے کو اٹھا رکھا ہے۔

صوفیہ فیشن ماڈلنگ بھی کرتی رہی ہیں۔ ماڈل کا پیشہ انہوں نے اپنے تعلیمی اخراجات پورے کرنے کے لیے اختیار کیا تھا۔ زندگی کے مشکل ایام میں وہ ایک ریستوران میں ویٹرس کا کام بھی کرچکی ہیں۔

شہزادے کی مے نوشی

اہلیہ صوفیہ ہیلک وسٹ کی طرح شہزادہ کارل فیلپ کے ماضی پربھی لوگ انگلیاں اٹھاتے رہے ہیں۔ کچھ عرصہ قبل انہیں اسٹاک ہوم میں ایک نائٹ کلب میں شرکت کے دوران ضرورت سے زیادہ مے نوشے کے باعث نشے میں دھت پایا گیا تھا۔ ان کی نشے کی حالت میں موبائل فون کیمرے کی مدد سے بنائی گئی فوٹیج اور تصاویر انٹرنیٹ پر پوسٹ ہونے کے بعد بہت لے دی ہوئی تھی اور شہزادہ کارل کی شہرت کو کافی نقصان پہنچا تھا۔ تاہم پانچ سال قبل جب ان کا صوفیہ سے تعارف ہوا اور دونوں ایک دوسرے کی محبت کے اسیر ہوئے تو لوگوں کی توجہ ان کے رومانس پر مرکوز ہو گئی تھی۔ دونوں ایک ہی گھرمیں پانچ سال تک رہے اور آخر کو رشتہ ازدواج میں منسلک ہو گئے۔

اگرچہ پیدائش کے فورا شاہ سویڈن نے شہزادہ کارل فیلپ کو ولی عہد نامزد کر دیا تھا تاہم سنہ 1980ء میں انہوں نے ولی عہد کے تقرر کے دستور میں ترمیم کرتے ہوئے ان کی ہمیشرہ کو مستقبل کی ملکہ نامزد کیا۔ اس وقت شہزادہ کارل ولی عہد کے تیسرے نمبر پر ہیں۔

شادی کی تقریب میں نہ صرف سویڈش شاہی خاندان کی اہم شخصیات، سیاسی رہ نما، کاروباری شخصیات موجود تھیں بلکہ کئی دوسرے مالک کی اہم حکومتی شخصیات کو بھی مدعو کیا گیا تھا۔ ان میں بیلجیئم، ڈنمارک، ہالینڈ اور ناروے کی ملکائیں، برطانوی شہزادہ اڈورڈ، جاپان کی شہزادہ تاکاماڈو، سویڈش وزیراعظم اسٹیفن لووین، شہزادہ کارل کی دونوں بہنوں نے شرکت کی۔ شادی کے موقع پرشاہی خاندان کا حصہ بننے والی صوفیہ ہیلک وسٹ کو "دوچیز فارملانڈ" کا لقب دیا گیا۔

دن بدلنے میں دیرنہیں لگتی۔ ایک وقت تھا کہ صوفیہ ایک غربت کے باعث اپنی تعلیم جاری رکھنے کے لیے ہوٹل میں کام کرنے ایک ایک پائی جمع کرنے کے لیے بھی مجبور تھی مگر آج وہ شاہی تخت کی مالک بن چکی ہے۔