.

صدر اوباما کی بیٹیوں کی ہوٹل میں شاہانہ 'بخشیش'

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

اسے امریکا میں امن و امان کا مظہر کہیے یا پھر صدر براک اوباما کی بیٹیوں کا بڑا ہونا کہ دونوں بہنیں اپنے والدین کے بغیر نیویارک شہر کے ایک کیفے میں کھانا کھانے آ دھمکیں۔

ساشا اور مالیا نے نیویارک شہر کے علاقے نولیٹا کے روبیز کیفے میں گذشتہ رات کھانا کھایا اور اپنے ایک سو ڈالر سے زاید پر 34 ڈالر بطور 'بخشیش' ادا کئے۔ امریکی صدر کی بیٹیوں کی یہ 'سخاوت' روایتی طور پر دس فیصد کی شرح سے دی جانے والی 'ٹپ' سے کافی زاید تھا۔

تفیصلات کے مطابق صدر اوباما کی لاڈلی بیٹیوں میں سترہ سالہ مالیا نے ساڑھے بارہ ڈالر مالیت کا چکن ایواکاڈو سلاد منگوایا جبکہ چودہ سالہ ساشا نے چیز برگر کھایا۔

کیفے میں دعوت پر بلوانے والے ایک نامعلوم فرد نے دونوں لڑکیوں کو 'نرم خود اور مہذب' قرار دیا۔
درایں اثنا کیفے میں کھانا کھانے والے ایک اور شخص نے بتایا کہ امریکی صدر کی بیٹیوں کی کیفے میں آمد کا وہاں موجود کسی فرد نے غیر معمولی نوٹس نہیں لیا۔