.

"الازہر ملازمین پر اخوان سے لاتعلقی ثابت کرنا لازم"

قدیم درسگاہ کے سیکرٹری کے نوٹیفیکشن میں 15 دن کی مہلت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مصر کی معروف درسگاہ جامعہ الازہر نے ایک نوٹیفیکشن کے ذریعے اپنے تمام ملازمین کو خبردار کیا ہے کہ وہ پندرہ دنوں کے اندر اخوان المسلمون سمیت تشدد پر ابھارنے والی تمام تنظیموں سے قطع تعلقی کا اعلان کریں بصورت دیگر ان کے خلاف انضباطی کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔

جامعہ الازہر کے سیکرٹری ڈاکٹر عباس شومان کے دستخط سے جاری ہونے والے نوٹیفیکشن کے مطابق جامعہ الازہر کے تمام ملازمین پر لازم ہے کہ وہ حکومت کے خلاف سرگرم تنظیموں سے اپنی عدم وابستگی کا ثبوت پیش کریں کیونکہ ایسے ادارے اور تنظیمیں ملک کی سلامتی اور استحکام کے لئے خطرہ ہیں۔

ڈاکٹر شومان کے مطابق یہ نوٹیفیکشن شیخ الازہر ڈاکٹر احمد الطیب کی منظوری اور علم کے بعد جاری کیا گیا ہے۔

سیکرٹری جامعہ الازہر کے نوٹیفیکشن میں خبردار کیا گیا ہے کہ دین کو اپنے نظریات بشمول طاقت کے استعمال کے ذریعے حکومت گرانے جیسے اقدام کی ترویج بھی شامل ہے پر یقین رکھنے والی تنظیموں کے ارکان کے خلاف فیصلہ کن اقدام اٹھایا جائے گا، اس لئے دی جانے والی پندرہ روزہ مہلت کے دوران جامعہ الازہر کے تمام ملازمین ایسی تنظیموں سے اپنا عدم تعلق انتظامیہ کے سامنے ثابت کریں۔