.

الحدیدہ میں فضائی بمباری سے باغیوں کے اسلحہ مراکز تباہ

مآرب کے کئی محاذوں پر مزاحمت کاروں کا کنٹرول

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کی قیادت میں یمن میں حوثی باغیوں کے خلاف جاری آپریشن میں الحدیدہ اور المخاء بندرگاہوں میں موجود باغیوں کے اسلحہ مراکز پر فضائی حملے کر کے بڑے پیمانے پر اسلحہ اور گولہ بارود تباہ کردیا گیا ہے۔

العربیہ ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق رات گئے اتحادی طیاروں نے صنعاء کے قریب مآرب میں نِھم ڈاریکٹوریٹ اور اس کے آس پاس موجود حوثیوں اور علی صالح کے وفاداروں کے ٹھکانوں پر بھی بمباری کی۔ الجوف شہر کے الحزم مرکز میں بھی حوثیوں کے مراکز کو نشانہ بنایا گیا جب کہ صعدہ میں سحار کے مقام پر بھی فضائی حملے کر کے باغیوں کوغیرمعمولی جانی اور مالی نقصان سے دوچار کیا گیا ہے۔

درایں اثناء یمن میں باغیوں کے خلاف اور آئینی حکومت کی حمایت میں لڑنے والی مزاحمتی ملیشیا نے شمالی مغربی مآرب میں چار اہم مقامات پر قبضہ کرنے کے بعد حوثیوں کے اسلحہ کی بڑی مقدار ضبط کرلی ہے۔

ابین اور البیضاء صوبوں کے درمیان نہایت اہمیت کے حامل عقبہ ثرہ پر بھی مزاحمتی فورسز نے کنٹرول حاصل کرلیا ہے۔ لڑائی میں مزاحمت کاروں نے باغیوں کی 30 فوجی گاڑیاں تباہ کردی ہیں اور باقی پر قبضہ کر لیا گیا ہے۔ عقبہ ثرہ میں پچھلے دو دن سے جاری گھمسان کی جنگ میں باغیوں کو بڑے پیمانے پر جانی نقصان سے دوچار کیا گیا۔