.

سعودی عرب :کارسواروں کی فائرنگ سے پولیس اہلکار زخمی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کے ساحلی شہر جدہ میں کار میں سوار نامعلوم مسلح افراد نے پولیس کی ایک کار پر فائرنگ کی ہے جس سے ایک پولیس اہلکار زخمی ہوگیا ہے۔

مکہ ریجن میں پولیس کے قائم ترجمان نے سعودی پریس ایجنسی کو ایک بیان میں بتایا ہے کہ گولی لگنے سے پولیس اہلکار کو زیادہ شدید زخم نہیں آیا ہے اور اس کی حالت بہتر ہے۔حملہ آوروں کی تلاش کے لیے تفتیش جاری ہے۔

واضح رہے کہ حالیہ مہینوں کے دوران سعودی عرب میں سکیورٹی فورسز پر حملوں میں تیزی آئی ہے اور عراق اور شام میں برسرپیکار سخت گیر جنگجو گروپ داعش کو ان میں سے بیشتر حملوں کا مورد الزام ٹھہرایا گیا ہے۔

سعودی سکیورٹی فورسز پر 6 اگست کو سب سے تباہ کن حملہ کیا گیا تھا،تب جنوبی شہر ابھا میں پولیس کے ہیڈکوارٹرز میں حملہ آور بمبار نے ایک مسجد میں گھس کر خود کو دھماکے سے اڑا دیا تھا۔اس حملے میں پندرہ افراد جاں بحق ہوگئے تھے۔

اس سے پہلے 3 جولائی کو چھاپہ مار کارروائی کے دوران ایک پولیس اہلکار مسلح افراد کی گولیوں کا نشانہ بن گیا تھا۔اس کارروائی میں تین مشتبہ افراد کو گرفتار کر لیا گیا تھا اور ان کے قبضے سے داعش کے پرچم بھی برآمد ہوئے تھے۔