.

'مشرق وسطیٰ کے ممالک شام میں افواج اتارنے پر رضامند'

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکی وزیر خارجہ جان کیری کا ہے کہ انہیں اعتماد ہے کہ مشرق وسطیٰ کی طاقتیں دولت اسلامیہ عراق وشام کو شکست دینے میں مدد کے لئے شام میں فوجیں اتاریں گی۔

واشنگٹن نے اب تک عراق اور شام میں اتحادی افواج کی بمباری کی مہم کو مزید مضبوط بنانے کے لئے زمینی افواج کو میدان جنگ میں بھیجنے کی تجاویز سے اجتناب کیا ہے۔

مگر امریکی وزیر خارجہ نے امریکی نشریاتی ادارے 'سی این این' سے بات کرتے ہوئے کہا ہے کہ جب ایسی مداخلت کا وقت آئیگا تو شام کے کچھ ہمسایہ ممالک اس موقع پر قدم اٹھاسکتے ہیں۔

جان کیری کا کہنا تھا کہ" ہم خطے کے دوسرے ممالک سے بہت خاص اقدامات اٹھانے کے حوالے سے بات چیت کررہے ہیں۔ ہمیں زمینی افواج کی ضرورت پڑے گی۔ مجھے یقین ہے کہ اس موقع پر زمینی افواج موجود ہوں گی۔"

کیری کا کہنا تھا کہ "صدر اوباما نے یہ بات بہت واضح کردی ہے کہ امریکی افواج اس معاملے میں براہ راست شامل نہیں ہوںگی۔ مگر مجھے علم ہے کہ کچھ دیگر لوگ اس بارے میں بات کررہے ہیں۔ اس خطے میں کچھ ایسے لوگ موجود ہیں جو کہ ایسا قدم اٹھانے کی صلاحیت رکھتے ہیں۔"

جان کیری نے اس موقع پر زمینی آپریشن میں حصہ لینے کی رضامندی ظاہر کرنے والے ممالک کا نام نہیں لیا۔