یمن: حوثیوں کے میزائل حملوں میں 20 شہری جاں بحق

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

#یمن کے وسطی علاقے #مآرب میں حوثی باغیوں اور منحرف سابق صدر علی #عبداللہ_صالح کی وفادار ملیشیا کی جانب سے اندھا دھند راکٹ حملے، توپ خانے سے گولہ باری اور مشین گنوں سے فائرنگ کی گئی ہے جس کے نتیجے میں کم سے کم 20 عام شہری جاں بحق اور دسیوں زخمی ہوگئے ہیں۔

العربیہ ٹی وی کے ذرائع کے مطابق جمعہ کے روز #حوثی باغیوں اور علی صالح کے حامیوں نے مآرب میں بازاروں اور رہائشی کالونیوں پر کاتیوشا راکٹوں، توپ خانے اور ہاون میزائلوں سے تابڑ توڑ حملے کیے جس کے نتیجے میں بڑے پیمانے پر شہریوں کا جانی نقصان ہوا ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ مآرب کے جنوب مغربی علاقوں الجفینہ اور الفاوی میں متمرکز باغیوں نے کاتیوشا میزائلوں، توپ خانے اور ہاون راکٹوں کے ذریعے شہری آبادی کو نشانہ بنایا۔ گولہ باری کے نتیجے میں کئی مکانات،دکانیں اور مقامی حکومتی مرکز کو نقصان پہنچا ہے۔

ادھر #سعودی_عرب کی قیادت میں باغیوں کے خلاف جاری فوجی آپریشن کے دوران جنگی طیاروں نے #صنعاء میں حوثیوں کے زیرکنٹرول بریگیڈ ون کے ہیڈ کواٹر پر بمباری کی جس کے نتیجے میں بھاری مقدار میں اسلحہ اور گولہ بارود تباہ ہوا ہے۔ اتحادی طیاروں نے شمالی صنعاء میں الجراف کالونی میں واقع یمنی ٹیلی ویژن ہیڈ کوارٹر کو بھی نشانہ بناگیا۔

عینی شاہدین کا کہنا ہے کہ صنعاء میں ایک اسلحہ ڈیپو پر بمباری کے بعد دو گھنٹے تک دھواں اور آگ کے شعلوں کے ساتھ ساتھ وہاں پر دھماکوں کی آوازیں سنائی دیتی رہی ہیں۔ دھواں اس قدر زیادہ تھا کہ اس کے نتیجے میں شمالی دارالحکومت کی فضاء چھپ گئی تھی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں