.

شاہ سلمان کا جائے حادثہ کا دورہ، زخمیوں کی عیادت

'سعودی عرب کا فرمانروا حرمین شریفین کا خادم ہے'

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

#سعودی_عرب کے فرمانروا اور خادم الحرمین الشریفین #شاہ_سلمان بن عبدالعزیز نے جمعہ کی شام #مسجد_حرام کے قریب پیش آنے والے کرین حادثے کی جگہ کا دورہ کیا اور مسجد حرام کے متاثرہ علاقوں میں بھی گئے۔ شاہ سلمان نے کرین حادثے کے نتیجے میں زخمی ہونے والے حجاج اور دوسرے شہریوں کی النور اسپتال میں عیادت بھی کی۔

خیال رہے کہ جمعہ کی شام نماز مغرب کے وقت #مکہ مکرمہ میں انتہائی خراب موسم، گرج چمک اور تیز آندھی کے نتیجے میں مسجد حرام کے مشرقی سمت میں زیرتعمیر حصے میں لگی ایک کرین ٹوٹ کر مسجد پر آگری تھی جس کے نتیجے میں 107 نمازی شہید اور 238 زخمی ہوگئے تھے۔

العربیہ ڈٓاٹ نیٹ کے مطابق زخمیوں سے عیادت اور مسجد حرام کے دورے کے دوران حکومتی عہدیداروں سے بات کرتے ہوئے شاہ سلمان نے کہا کہ سعودی عرب حقیقی معنوں میں حرمین شریفین کا خادم ہے۔ انہوں نے کہا کہ کرین حادثے کے نتائج جلد ہی جاری کیے جائیں گے۔ مسجد حرام کے متاثرہ حصے کے دورے کے دوران انہوں نے کہا کہ میرے یہاں آنے کا مقصد حادثے کے اسباب کے بارے میں معلومات حاصل کرنا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ سعودی عرب کو یہ اعزاز حاصل ہے اس کا ہر فرمانروا حرمین شریفین کا خادم ہوتا ہے۔ شاہ سلمان نے حادثے میں شہید ہونے والے شہریوں کے لواحقین سے تعزیت کی اور شہداء کی بلندری درجات اور پسماندگان کے لیے صبر جمیل کی دعا کی۔

مسجد حرام میں آمد پر مکہ مکرمہ کے گورنر شہزادہ #خالد_الفیصل نے شاہ سلمان کا استقبال کیا۔ ان کے ہمراہ ولی عہد شہزادہ محمد بن نائف، وزیردفاع و نائب ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان اور دیگر اعلیٰ عہدیدار بھی موجود تھے۔

شاہ سلمان نے النور اسپتال میں کرین حادثے کے زخمیوں کی عیادت کی اور ان کی جلد صحت یابی کے لیے اپنی نیک تمنائوں کا بھی اظہار کیا۔ النور اسپتال میں لائے گئے زخمیوں میں #ایران، #ترکی، #افغانستان، #مصر اور #پاکستان کے شہری بھی شامل ہیں۔ انہوں نے اسپتال انتظامیہ اور وزارت صحت کو تمام زخمیوں کو تمام سہولتیں مہیا کرنے کی تاکید کی۔