شاہ سلمان کی عیادت کے لیے آمد پر حادثے کے زخمی حیران!

مُجھے بتایا گیا کہ بادشاہ سلامت آپ سے ملنے آئے ہیں: ایرانی حاجیہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

جُمعہ کے روز #مسجد_حرام میں ایک کرین کے حادثے کے نتیجے میں زخمی ہونے والے حجاج کرام نے اسپتال میں دوران علاج #شاہ_سلمان بن عبدالعزیز کی آمد اور خیریت دریافت کرنے پر حیرت کا اظہار کیا ہے۔ زخمی عازمین حج کا کہنا ہے کہ جب شاہ سلمان ان سے ملنے آئے تو اُنہیں یقین نہیں آ رہا تھا کہ خادم الحرمین الشریفین جیسی عظیم المرتبت شخصیت معمولی نوعیت کے لوگوں کی عیادت کے لیے چل کر ان کے پاس آئے گی۔

خیال رہے کہ شاہ سلمان بن عبدالعزیز نے ہفتے کے روز #مکہ مکرمہ کے النور اسپتال میں زیرعلاج کرین حادثے کے زخمیوں کی عیادت کی۔ اس موقع پر انہوں نے #ایران سے آئی ایک حاجیہ سے بھی اس کی مزاج پرسی کی۔ معمر ایرانی خاتون محقی بیوک نے اخبار "الشرق الاوسط" سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ "مجھے بتایا گیا کہ شاہ سلمان بن عبدالعزیز میری عیادت کو تشریف لائے ہیں۔ میرے سمیت دوسرے زخمیوں میں سے کسی کو یقین نہیں آرہا تھا کہ خادم الحرمین الشریفین ہم جیسے معمولی لوگوں کی عیادت کو تشریف لائیں گے۔ شاہ سلمان آئے۔ انہوں نے فردا فردا تمام زخمیوں کی مزاج پرسی کی، ان کی خیریت دریافت کرنے کے بعد ان کی جلد صحت یابی بھی دعا کی اور ساتھ ہی یقین دلایا کہ حکومت اسی سال ان کا حج مکمل کرائے گی."

شاہ سلمان کی اسپتال آمد اور زخمیوں کی عیادت کی ایک فوٹیج بھی منظر عام پر آئے ہے۔ فوٹیج سے ظاہر ہوتا ہے کہ شاہ سلمان کسی خصوصی پروٹوکول کی پرواہ کی کیے بغیر کرین حادثے کے زخمیوں کی عیادت کررہے ہیں۔ ان کی آمد سے زخمیوں کو ایک نیا حوصلہ ملا کیونکہ شاہ سلمان سے ان کی ملاقات ان کے لیے ناقابل یقین لمحہ تھا۔ اس دوران انہوں نے ایرانی حاجیہ سے بھی ملاقات کی۔ کرین کے حادثے میں ایرانی خاتون کی دائیں ران زخمی ہوئی ہے۔

زخمی ہونے والی ایرانی خاتون نے عربی اخبار کو بتایا کہ انہیں اسپتالوں میں نہایت ہی عمدہ اور بہترین طبی سہولیات مہیا کی گئی ہیں۔ انہیں حادثے کے فوری بعد اسپتال منتقل کردیا گیا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں