.

حوثی ملیشیا کا خاتمہ نوشتہ دیوار ہے: یمنی صدر

عیدالاضحیٰ کے موقع پر عدن سے امت کے نام تہنیتی پیغام

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن کے صدر عبد ربہ منصور ہادی نے عدن پہنچنے کے بعد اپنے پہلے خطاب میں کہا ہے کہ حوثی باغی ملیشیا کا خاتمہ نوشہ دیوار ہے۔

وہ عید الاضحیٰ کے موقع پر عرب اور اسلامی دنیا کو مبارکباد کا پیغام دے رہے تھے۔ یہ عید یمنی صدر کے چھ مہینے بعد اپنے ملک واپسی کے دو روز بعد آئی ہے۔

منصور ہادی نے حوثی ملیشیا اور معزول صدر علی عبداللہ صالح کے پیروکاروں کو کڑی تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ ریاست مخالف ان باغیوں نے مملکت کے مختلف حصوں میں ظالمانہ لڑائی چھیڑ رکھی ہے جس کا ایندھن بے گناہ افراد بن رہے ہیں۔ اس میں ریاست کی سول اور فوجی صلاحیت کو بے پناہ نقصان پہنچا۔ انہوں نے کہ باغی گروہ کو مختلف محاذوں پر یکے بعد دیگرے شکست کا سامنا ہے اور جلد ہی ان پر قابو پا لیا جا جائے گا۔ ریاست کی رٹ بحال کرنے کے لئے جتنی بھی قربانیاں دینا پڑیں ان سے دریغ نہیں کیا جائے گا۔

انہوں نے اب تک باغیوں کے خلاف حاصل ہونے والی کامیابیوں کو سراہتے ہوئے کہا کہ یمن کو ایسے عناصر سے پاک کرنے کا وقت آن پہنچا ہے، نفرت کے پرچارک باغیوں کی کوششوں کے باوجود ملک کے طول و عرض میں امن و سلامتی کا راج ہو گا۔
انہوں نے کہا کہ ملک میں عید الاضحی کی خوشیاں ایک ایسے وقت میں منائی جا رہی ہیں کہ جب لحج، ابین، شبوہ اور مارب میں گذشتہ دو مہینوں سے کامیابیاں مل رہی ہیں۔

یمنی صدر نے عوام کی جانب سے سعودی عرب کی قیادت میں عرب اتحادی فوج کا شکریہ ادا کیا کہ جس نے سچے دل سے بہادری اور شجاعت کی داستین رقم کرتے ہوئے یمن کو تباہی کے گڑھے میں گرنے سے بچایا۔