ایران، منیٰ حادثے پر سیاست چمکا رہا ہے: الجبیر

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

#سعودی_عرب کے وزیر خارجہ #عادل_الجبیر نے #حج سے متعلق انتظامات پر ایرانی تنقید کو سختی سے مسترد کیا ہے۔ #تہران نے #منیٰ میں ہونے والی بھگڈر میں متعدد ایرانیوں سمیت 796 حجاج کی شہادت کے واقعہ کی تحقیقات کا مطالبہ کیا ہے۔

ایک غیر ملکی خبر رساں ایجنسی کے نے عادل الجبیر کا ایک بیان نقل کیا ہے جس میں ان کا کہنا تھا کہ "میں سمجھتا ہوں کہ #ایران سیاست چمکانے کے بجائے اس حقیقت کو ذہن میں رکھے کہ اس سانحے میں وہ لوگ شہید ہوئے ہیں جو ایک مقدس مذہبی فریضہ سرانجام دے رہے تھے۔"

ایرانی صدر #حسن_روحانی، جو اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی میں شرکت کی غرض سے ان دنوں #نیویارک میں ہیں، نے جمعرات کے روز ہونے والی تباہی کی تحقیق کا مطالبہ کیا ہے جس میں کم سے کم 136 ایرانی حاجیوں سمیت 769 حجاج شہید ہوئے۔

عادل الجبیر کا کہنا تھا کہ ہم کسی بات پر پردہ پوشی نہیں کریں گے، اگر کسی سے کوئی غلطی ہوئی، اسے بھی سامنے لایا جائے گا اور اس کا محاسبہ کیا جائے گا۔

سعودی وزیر خارجہ نے اپنے امریکی ہم منصب #جان_کیری کے ساتھ صحافیوں کو بتایا کہ 'یہ وقت سیاست چمکانے کے لئے مناسب نہیں ہے۔'

اپنے بیان کے اختتام میں ان کا کہنا تھا کہ 'مجھے امید ہے کہ ایرانی قیادت اس المناک واقعے میں شہید ہونے والوں کے معاملے پر عقلمندی سے کام لیتے ہوئے تحقیقات کے نتائج کا انتظار کرے گی۔'

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں