.

الجزائر: کیمپ میں آتش زدگی سے 18 افریقی پناہ گزین ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

الجزائر کے جنوبی علاقے میں افریقی مہاجرین کے لیے قائم ایک کیمپ میں آگ لگنے سے اٹھارہ افراد ہلاک اور سینتیس زخمی ہوگئے ہیں۔

الجزائر کے سرکاری ریڈیو کی اطلاع کے مطابق دارالحکومت الجزائر سے پانچ سو کلومیٹر دور واقع صوبہ عورجلہ میں افریقی مہاجرین کے کیمپ میں آگ لگی تھی۔اس کیمپ میں قریبا ساڑھے چھے سو افریقی رہ رہے ہیں۔

سرکاری میڈیا نے بتایا ہے کہ آگ لگنے کی وجوہ کے تعیّن کے لیے ابھی تحقیقات کی جارہی ہے۔تاہم فوری طور پر آتش زدگی کے واقعے میں مرنے والوں اور زخمیوں کی قومیت معلوم نہیں ہوسکی ہے۔

الجزائر کے جنوبی علاقے میں پڑوسی ممالک مالی اور نیجر سے تعلق رکھنے والے افریقی تارکین وطن کی بڑی تعداد میں آمد ہوتی ہے۔ تشدد اور بھوک سے بچ کر آنے والے یہ تارکین وطن الجزائر سے پڑوسی ملک لیبیا کا رُخ کرتے ہیں اور وہاں سے وہ پُرخطر اور دشوار گذار سمندری راستے سے یورپی ممالک کی جانب چلے جاتے ہیں۔

ان غیر قانونی تارکینِ وطن کی ایک بڑی تعداد لیبیا اور الجزائر ہی میں روزگار کے سلسلے میں مقیم ہوجاتی ہے۔ الجزائر کا نیجر کی حکومت کے ساتھ کچھ عرصہ پہلے ایک سمجھوتا طے پایا تھا جس کے بعد سیکڑوں نیجری شہریوں کو کیمپ سے ان کے ملک میں واپس بھیجا جارہا ہے۔