.

عبوری سیٹ اپ کے لئے بشار کا جانا ضروری نہیں: فابیوس

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

فرانس کے وزیر خارجہ لوراں فابیوس نے کہا ہے کہ شام میں عبوری سیاسی نظام کے لئے بشار الاسد کا اقتدار سے علاحدگی ضروری نہیں ہے۔

فرانسیسی اخبار 'لفبرو گرا ڈی لیون' سے گفتگو کرتے ہوئے وزیر خارجہ نے کہا کہ متحدہ شام کے لئے عبوری سیاسی سیٹ اپ ضروری ہے۔ اس کا مطلب یہ ہر گز نہیں کہ بشار الاسد عبوری سیٹ سے پہلے اقتدار چھوڑ دیں، تاہم مستقبل کے لئے کچھ یقین دہانیاں ضروری ہیں۔'

فابیوس نے مزید کہا کہ 'داعش کی سرکوبی طے شدہ فیصلہ ہے، تاہم شامی اور علاقائی طاقتوں کے اتحاد کے بغیر اس ہونا ممکن نہیں ہے۔ انہوں نے سوال کیا کہ اگر آبادی کی بڑی اکثریت بشار الاسد کے خلاف ہو تو ان کا منصب صدارت پر متمکن رہنا کیونکر ممکن ہے؟'

شام اور عراق میں داعش کے خلاف آپریشن میں مصروف اتحاد کے دو اہم ملک امریکا اور فرانس مقامی اور علاقائی سیاسی اور فوجی شراکت کے ذریعے پانچ برس سے اس مسئلے کا حل تلاش کرنے میں مصروف ہیں۔

پیرس یہ تجویز دے چکا ہے کہ شام میں انتہا پسندوں کا خاتمہ کرنے کے لئے شامی فوج کو بھی اس شرط پر شامل کیا جائے کہ بشار الاسد ان کے کمانڈر انچیف نہ ہوں۔