سعودی اتحاد کے حملے میں حوثیوں کا اسکڈ میزائل کیرئیر تباہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کی قیادت میں اتحادی ممالک کے لڑاکا طیاروں نے سعودی سرحد کے ساتھ واقع یمنی علاقے میں ایک اسکڈ میزائل کیرئیر کو تباہ کردیا ہے۔

العربیہ نیوز چینل نے اتوار کو اطلاع دی ہے کہ یہ کیرئیر کو ایران کے حمایت یافتہ حوثی باغیوں اور سابق یمنی صدر علی عبداللہ صالح کی وفادار ملیشیا کے زیر استعمال تھا اور اتحادی فوج نے اس کی نقل وحرکت کا جائزہ لینے کے بعد اس کو تباہ کیا ہے۔

العربیہ نے اپنی رپورٹ میں بتایا ہے کہ یہ اسکڈ میزائل کیرئیر سعودی عرب کی سرحد کی جانب آرہا تھا لیکن یہ نہیں بتایا ہے کہ وہ کس جانب سے آ رہا تھا۔

درایں اثناء یمنی صدر عبد ربہ منصور ہادی کی وفادار عوامی مزاحمتی فورسز نے مآرب شہر سے مغرب میں حوثی باغیوں اور ان کی اتحادی صالح ملیشیا کے ساتھ شدید جھڑپوں کے بعد سیرواہ کے علاقے کی جانب پیش قدمی کی ہے۔مآرب دارالحکومت صنعا سے ایک سو بیس کلومیٹر مشرق میں واقع ہے اور اس صوبے اور اس کے ساتھ واقع الجوف میں یمن کی سرکاری فوج اور حوثی باغیوں کے درمیان جھڑپیں ہورہی ہیں۔

صدر عبد ربہ ہادی کی وفادار فورسز نے جولائی اور اگست میں سعودی عرب کی قیادت میں عرب اتحادیوں کی فضائی مدد سے عدن اور دوسرے جنوبی شہروں میں حوثی باغیوں کے مقابلے میں تیز رفتاری سے پیش قدمی کی تھی لیکن حالیہ ہفتوں کے دوران وہ وسطی شہر تعز اور دوسرے محاذوں پر حوثیوں کے مقابلے میں اس طرح تیز رفتاری سے پیش قدمی نہیں کرسکے ہیں۔حوثی باغیوں نے گذشتہ سال ستمبر سے صنعا پر قبضہ کررکھا ہے اور ملک کے شمالی صوبوں میں بھی ان کی گرفت بدستور قائم ہے۔

واضح رہے کہ سعودی عرب کی قیادت میں عرب اتحاد یمن میں حوثی شیعہ باغیوں کے خلاف مارچ سے فضائی حملے کررہا ہے۔ان حملوں کے آغاز کے بعد سے دونوں ملکوں کے درمیان سرحد پر حوثی باغیوں اور سعودی فورسز میں متعدد مرتبہ خونریز جھڑپیں ہوچکی ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں