عدن کے گورنر چھے ساتھیوں سمیت کار حملے میں ہلاک

جنرل جعفر کو ہلاک کرنے کے طریقہ کار سے متعلق متضاد اطلاعات

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

یمن کے عبوری صدر مقام عدن سے 'العربیہ' کے نمائندے نے اپنے مراسلے میں بتایا ہے کہ شہر کے گورنر جنرل جعفر محمد سعد قتل کر دیئے گئے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق گورنر کے ہمراہ ان کے چھ سیکیورٹی اہلکار بھی کار پر حملے میں ہلاک ہوئے۔ یہ حملہ اس وقت کیا گیا جب ان کی گاڑی عدن کی التواھی کالونی سے گزر رہی تھی۔

دھماکے کی نوعیت کے بارے میں متضاد اطلاعات ہیں۔ ایک اطلاع کے مطابق دھماکا نصب شدہ بم کے ذریعے کیا گیا جبکہ دوسری اطلاع میں گورنر کے قافلے کو راکٹ سے نشانہ بنایا گیا۔

جنرل سعد کو اکتوبر کے اوائل میں عدن کا گورنر مقرر کیا گیا تھا۔ اس سے پہلے وہ یمنی صدر عبد ربہ منصور ھادی کے فوجی مشیر کے عہدے پر خدمات سرانجام دیتے رہے ہیں۔ وہ یمنی فوج کے اعلی عہدیداروں میں شامل تھے اور ان کا تعلق عدن ہی تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں