ایران: داعش کی ویب سائٹس چلانے کے الزام میں 53 گرفتار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

ایران میں انٹرنیٹ کی نگرانی کرنے والے ادارے کے سربراہ کے مطابق قانون نافذ کرنے والے اداروں نے انتہا پسند گروپ دولت اسلامیہ عراق وشام 'داعش' کی حمایت میں ویب سائٹس چلانے کے الزام میں 53 افراد کو حراست میں لے لیا ہے۔

ایرانی سائبر پولیس کے سربراہ کمال ھدینفرد نے بتایا ہے کہ ان افراد میں سے اکثر ایران کے سرحدی علاقوں میں مقیم تھے۔ انہوں نے اس موقع پر کسی سرحدی علاقے کا نام نہیں لیا۔

گذشتہ مہینے کے دوران ایرانی حکومت نے بتایا تھا کہ اس نے عراقی سرحد کے ساتھ ملحقہ صوبے کرمانشاہ میں ایک شدت پسند سنی مسلمان گروپ کے لئے جنگجو بھرتی کرنے والے ایک سیل کو حراست میں لیا ہے۔

اس علاقے میں مجموعی طور پر ایک بڑی سنی آبادی رہائش پذیر ہے جو کہ تہران کی شیعہ حکومت کی پالیسیوں سے ناخوش ہے۔ ایران نے شام اور عراق میں لڑنے والی شیعہ تنظیموں اور ملیشیائوں کی مدد کے لئے فوجی افسران بھی بھیجے ہیں جس کی وجہ سے خطے میں کشیدگی پائی جاتی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں