.

اتحادیوں نے یمن کا اہم جزیرہ دہشت گردوں سے پاک کرا لیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن کی دستوری حکومت کے حامی فوجی اتحاد کی قیادت نے ملک کے اہم جزیرے حنیش الکبری کو انتہا پسندوں سے پاک کروانے کا اعلان کیا ہے۔

العربیہ نیوز چینل کے مطابق اتحادیوں کی مشترکہ فوج کی حمایت سے عوامی مزاحمت کاروں نے ایک منفرد کارروائی کے بعد جزیرے میں تطھیر کا عمل مکمل کیا۔ آپریشن میں اتحادی فوج کے نیوی اور فضائی دستوں نے حصہ لیا۔ اس مشن کو مکمل کرنے کے لئے چھاتہ بردار دستے بھی اتارے گئے اور اہم اہداف پر فضائی بمباری بھی کی گئی۔

اتحاد کی کمان نے بتایا کہ یہ کارروائی ایک ایسے وقت میں کی گئی ہے کہ جب حجہ اور الجوف کے علاقوں کو حوثی اور علی عبداللہ صالح کی ملیشیاؤں سے آزاد کرانے کے بعد وہاں عوامی مزاحمت کار اپنی کارروائیاں جاری رکھے ہوئے ہیں تاکہ وہاں آئینی حکومت کی رٹ بحال کی جا سکے اور یمن میں امن و استحکام کو یقینی بنایا جا سکے۔

یمن کی سرکاری فوج اور اتحادیوں کے حمایت یافتہ مزاحمت کاروں نے حوثی ملیشیا اور علی عبداللہ صالح کے جنگجوؤں کے خلاف مختلف محاذوں پر کامیابی حاصل کی ہے۔ الجوف، صرواح اور مارب کے مغرب میں ملنے والی کامیابیاں خاص طور پر قابل ذکر ہیں۔