.

اقوام متحدہ کی شام پر قرارداد کے اہم نکات کیا ہیں؟ جانئیے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

اقوام متحدہ کی سیکیورٹی کونسل نے جمعہ کے روز شام میں امن عمل کی حمایت ایک قرارداد کو متفقہ طور پر منظور کیا ہے جس کے نتیجے میں جنوری کے دوران باقاعدہ مذاکرات اور جنگ بندی کو عمل میں لایا گیا تھا۔

اس قرار داد کے اہم نکات مندرجہ ذیل ہیں:

- کونسل کو شام میں عوام کو درپیش مشکلات، انسانیت کی بگڑی صورتحال، روز بروز بگڑتے تنازعے اور دہشت گردی کے منفی اثرات، ملک میں پھیلنے والی تباہی اور فرقہ واریت پر شدید تشویش ہے۔

- شام میں جاری حالیہ بحران کا پائیدار صرف یہی ہے کہ شامی قیادت ایک ایسا سیاسی عمل شروع کرے جو 30 جون 2012ء کے جنیوا اعلامیے کے مطابق ہوگا اور اس سے شامی عوام کی جائز خواہشات پوری ہوسکیں۔ اس عمل میں ایک عبوری حکومتی باڈی کا قیام شامل ہوگا جو کہ باہمی رضامندی سے قائم کی جائے گی۔"

- یہ قرارداد 17 اقوام پر مشتمل بین الاقوامی سپورٹ گروپ برائے شام کی جانب سے شام میں جاری تنازعے کو ختم کرنے کی سفارتی کوششوں کی حوصلہ افزائی کرتی ہے اور اس گروپ کو اقوام متحدہ کی جانب سے دیر پاء تصفیے کی کوششوں کا مرکزی پلیٹ فارم کے طور پر جانتی ہے۔

- یہ قرارداد رواں ماہ کے دوران ریاض میں ہونے والی میٹنگ کی حزب اختلاف کے سیاسی اور مسلح گروپوں کو امن عمل میں شامل کرنے کے لئے ایک مذاکراتی ٹیم کے قیام میں ہونے والی افادیت کا اندازہ رکھتی ہے۔

یہ قرارداد اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل بان کی مون اور ان کے شام میں خصوصی نمائندے سٹیفان ڈی مستورا سے درخواست کرتی ہے کہ وہ جنوری 2016ء کا ٹارگٹ رکھ کر شامی حکومت اور حزب اختلاف کو فوری طور پر سیاسی منتقلی کے عمل میں باضابطہ طور پر شامل کریں۔

یہ قرارداد چھ ماہ کے دورانیہ کا اندازہ رکھ کر ایک قابل اعتماد، تمام فریقوں پر مشتمل اور فرقہ واریت سے عاری حکومت کا قیام عمل میں لائیں اور 18 ماہ کے اندر ایک نئے آئین کی تشکیل اور اقوام متحدہ کی نگرانی میں آزادانہ اور منصفانہ انتخابات کا انعقاد کروائیں جائیں۔

- بیرون ملک سمیت تمام شامی شہری ان انتخابات میں حصہ لینے کے مجاز ہوں گے۔

- یہ قرار داد اقوام متحدہ کی سربراہی میں شامی حکومت اور حزب اختلاف کے درمیان سیاسی منتقلی کے عمل کے شروع ہوتے ہی ملک بھر میں جنگ بندی کے آغاز کی حمایت کرتی ہے۔

یہ قرارداد درخواست کرتی ہے کہ اقوام متحدہ جنگ بندی کے طریقہ کار کو واضح کرے اور رکن ممالک شام میں موجود تمام فریقوں کو اس جنگ بندی کی پیروی پر آمادہ کرے۔

- یہ قرار داد جنگ بندی کی مانیٹرنگ اور رپورٹنگ کا طریقہ کار وضح کرنے کا مطالبہ کرتی ہے۔

- یہ قرارداد اردن کی جانب سے دہشت گرد گروپوں کی فہرست تیار کرنے کی کوشش کی تعریف کرتی ہے۔