.

یمنی فوج کی صنعاء کی جانب پیش قدمی سے حوثی بدک گئے

حوثیوں کی سپلائی لائن کاٹنے کی کوشش، شہر میں بکتر بند گاڑیوں کا مارچ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن کی سرکاری فوج نے صنعاء کے مضافات میں اہم فوجی ٹھکانوں اور پہاڑی چوٹیوں پر قبضے کے بعد دارلحکومت کی جانب پیش قدمی کے تناظر صنعاء پر قابض باغی ملیشیا نے اپنے جنگجوؤں کی بڑے پیمانے پر موبلائزیشن شروع کر رکھی ہے اور اس ضمن میں غیر معمولی سیکیورٹی انتظامات کئے جا رہے ہیں۔

ذرائع کے مطابق باغی ملیشیا کی صفوں میں خوف وہراس پایا جاتا ہے۔ باغیوں نے صنعاء میں جگہ جگہ ناکے لگا کر تلاشی کی کارروائیاں شروع کر رکھی ہیں۔ نیز دارلحکومت کی سڑکوں پر بکتر بند گاڑیاں بکثرت دیکھی جا سکتی ہیں جبکہ 'نھم' ڈائریکٹوری میں جھڑپوں کا سلسلہ جاری ہے جہاں پر سرکاری فوج اور عوامی مزاحمت کاروں نے صنعاء کے اردگرد اہم اسٹرٹیجک مقامات کا کنڑول حاصل کر لیا ہے۔

سرکاری فوج اور عوامی مزاحمت کاروں کی صنعاء گورنری کی جانب پیش قدمی اور شہر کے اردگرد اہم فوجی فوجی ٹھکانوں اور پہاڑوں پر اسٹرٹیجک پوزیشن کے کںڑول کو دیکھتے ہوئے علی عبداللہ صالح کے جنگجوؤں اور باغی حوثی ملیشیا کے جنگجوؤں کے اوسان خطا دکھائے دیتے ہیں۔ انہوں نے شہر پر بڑے پیمانے پر سیکیورٹی انتظامات اٹھائے ہیں۔

باغیوں نے صنعاء میں نئی فوجی چیک پوسٹیں قائم کر کے شہر کے اندر اور داخلی راستوں پر بکتر بند گاڑیاں کھڑی کر دی ہیں۔ حوثیوں کے زیر قبضہ فوجی کیمپوں میں سیکیورٹی ہائی الرٹ کر دی گئی ہے اور وہاں سے اسلحہ اور گولا بارود نامعلوم مقام پر منتقل کیا جا رہا ہے۔ صنعاء کے داخلی راستوں پر رکاوٹیں کھڑی جا رہی ہیں۔

اس پیش رفت کے ساتھ صنعاء کی قریبی ڈائریکٹوری 'نھم' میں باغیوں اور سرکاری فوج کے درمیان جھڑپوں کا سلسلہ جاری ہے۔ مزاحمت کاروں اور سرکاری فجو نے فرضہ نھم علاقے میں 314 نمبر فوجی کیمپ کا محاصرہ کر لیا ہے۔ مزاحمت کاروں کے ایک عہدیدار کا کہنا ہے کہ ان کے جنگجو اس وقت صنعاء کی قریب خولان کے علاقے میں جبل اللوز اور نھم کی جبل القرود اسٹرٹیجک پوزیشنز پر قابض ہیں۔ اس کا مقصد صنعاء میں حوثیوں کو جانے والی سپلائی کی لائن کاٹنا ہے اور دارلحکومت میں لڑائی کی تیاری کرنا ہے۔

یمن کے عوامی مزاحمت کاروں کے سرکاری ترجمان عبداللہ الاشرف نے الجوف میں اعلان کیا ہے کہ ان کے جنگجوؤں نے گورنری میں کلین اپ آپریشن شروع کر رکھا ہے۔ عوامی مزاحمت کاروں کی حمایت یافتہ سرکاری فوج جلد ہی الجوف کے تمام علاقوں پر اپنا کنڑول جمانے کے بعد وہاں سے باغیوں کو نکال باہر کرے گی۔