.

شام وعراق میں شہری ہلاکتوں کا امریکی اعتراف

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکی فوج نے مصدقہ طور پر اعتراف کیا ہے کہ #شام اور #عراق میں شدت پسند تنظیم دولت اسلامی’’#داعش‘‘ کے خلاف کیے گئے فضائی حملوں میں عام شہری بھی نشانہ بنتے رہے ہیں۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق امریکی فوج کی جانب جانب سے جاری کردہ ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ 12 اپریل سے 4 جولائی 2015ء کے دوران شام اور عراق میں داعش کے ٹھکانوں پر کیے گئے فضائی حملوں میں آٹھ عام شہری ہلاک اور 3 زخمی ہوگئے تھے۔

خیال رہے کہ سنہ 2014ء میں داعش کے خلاف شروع کی گئی عالمی مہم کے بعد امریکی فوج کا بمباری میں عام شہریوں کو نشانہ بنائے جانے کا یہ تیسرا اعتراف ہے۔ اس سے قب بھی امریکی سینٹرل کمانڈ کی جانب سے چھ عام شہریوں قتل کی تصدیق کی جا چکی ہے۔